پی کے63 نوشہرہ، ضمنی انتخاب میں ہارنے والے پی ٹی آئی امیدوار نےنتائج چیلنج کر دیئے

تحریک انصاف کے امیدوار کاکا عمر خیل نے الیکشن کمیشن میں پی کے 63 نوشہرہ کے انتخابی نتائج کیخلاف اپیل دائر کردی۔

درخواست میں موقف اختیار کیا گیا کہ ایک پولنگ اسٹیشن کے لیے 1800بیلٹ پیپر جاری کیے گئے مگر2400 ووٹ کاسٹ ہوئے ، 40فیصد پولنگ اسٹیشنز پر بد انتظامی اور سنگین بے قاعدگیاں سامنے آئیں۔

پی کے 63 سے تحریک انصاف کے امیدوار کاکا عمر خیل نے درخواست میں مزید کہا کہ انتخابی عملے نے سیریل نمبر ،ووٹوں کی تفصیل میں واضح ردو بدل کی، فارم46کی مختلف ریکارڈ پرمشتمل 2،2تصدیق شدہ کاپیاں جاری کی گئیں۔ ایک پولنگ اسٹیشن پر 1500 بیلٹ پیپرز غائب پائے گئے۔

درخواست میں مزید انکشاف ہوا ہے کہ پولنگ اسٹیشن 41 میں 1200 بیلٹ پیپر جاری، جبکہ 483 ووٹ کاسٹ ہوئے اور 717 کی بجائے 1317 بیلٹ پیپرز ریٹرننگ افسر کو واپس بھیجے گئے۔ نوشہرہ کے حلقہ پی کے 63 کے 6ہزار ووٹ غائب ہونے کا انکشاف ہوا ہے۔

نجی ٹی وی چینل کا اس حوالے سے دعویٰ ہے کہ جیت کافرق 4100 جبکہ غائب ووٹوں کی تعداد 6000 سے زائد ہے اور تصدیق شدہ فارم46 میں واضح فرق سامنے آگیا، 6000 ووٹوں کا ریکارڈ نہیں۔

یاد رہے کہ خیبرپختونخوا پی کے 63 نوشہرہ کے 19 فروری کو منعقد ہونے والے ضمنی انتخاب میں ن لیگ نے کامیابی حاصل کی تھی ، الیکشن کمیشن کے جاری کردہ ‏نتائج کے مطابق ن لیگ کے ‏اختیار ولی 21ہزار 122 ووٹ لے کر کامیاب قرار پائے تھے جب کہ پی ٹی آئی کے کاکا عمر خیل17ہزار23 ووٹ لے کر ‏دوسرے نمبر پر رہے۔


  • Featured Content⭐


    24 گھنٹوں کے دوران 🔥


    From Our Blogs in last 24 hours 🔥


    >