لاہور ہائیکورٹ،حمزہ شہباز کی رہائی کا تحریری فیصلہ:جیل میں گلنے سڑنے نہیں دے سکتے

لاہور ہائیکورٹ کے جسٹس سرفراز ڈوگر کی سربراہی میں دو رکنی بنچ نے 24 فروری کو ہارڈ شپ کی بنیاد پر اپوزیشن لیڈر پنجاب اسمبلی حمزہ شہباز کی درخواست ضمانت منظور کی تھی۔ عدالت نے آج اس کیس پر دیا جانے والا فیصلہ تحریری طور پر جاری کر دیا ہے۔

عدالت نے اپنے تحریری فیصلہ میں لکھا ہے کہ ٹرائل کورٹ کی آرڈر شیٹ سے لگتا ہے کہ درخواست گزاران ہر پیشی پر موجود ہوتے ہیں، اگر کبھی وکیل نہ آئے تو اس کا قصور وار درخواست گزار نہیں ہوتا، وکلا کی احتساب عدالت میں عدم حاضری ہائیکورٹ یا اعلیٰ عدلیہ میں پیشی کے باعث ہوئی۔

عدالت نے اپنے فیصلے میں یہ بھی کہا کہ حمزہ شہباز کیس کے مرکزی ملزم نہیں ہیں اور ان کا کیس شہباز شریف کے برابر نہیں ہے جو پہلے ہی جیل میں ہیں۔ ملزمان کو پراسیکیوشن کے رحم و کرم پر نہیں چھوڑا جا سکتا اور غیر معینہ وقت تک جیل میں گلنے سڑنے بھی نہیں دے سکتے، ملزمان سماعت کے دوران ٹرائل کورٹ کے روبرو باقاعدگی سے پیش ہو رہے ہیں۔

عدالت نے حمزہ شہباز کوبطور زر ضمانت ایک، ایک کروڑ کے 2 مچلکے جمع کرانے کا حکم دیا اور ان کے شریک ملزم فضل داد عباسی اور شعیب قمر کی بھی بعد از گرفتاری درخواست ضمانت منظور کرتے ہوئے انہیں بھی 10،10 مچلکے داخل کرانے کا حکم دیا۔

  • I wish our prostitute courts would have same remarks for all poor prisoners >>> This option is only for BIG CRIMINALS .One who stole a cycle , bike , food or clothes , they should rotten in jails because the cant make our judges happy

  • عدالت کو ساتھ ہی نیب کے ڈارامہ بازوں کو 2سالوں کے لئے اندر کرنا چاہیے ھے نیب اور عدالتیں اچھا کھیل کھیل رہی ہیں اور ایسی بہانے عدالتوں نے 120 نئے ججوں کو بھی بھرتی کروا لیا ھے تاکہ آئیندہ 50 سالوں تک عدلیہ میں نیب کے جج صاحبان فرائص انجام دیتے رہیں اور عوام کو پھدو بناتے رہیں نیب اور عدلیہ اپنے کرپٹ آقاؤں کو اندر کر کے پھر خود ہی باہر نکال لیتے ہیں میڈیا عدلیہ نیب اور کرپٹ سیاست دانوں بیوروکریسی اور کالی بھیڑوں کی کی زبردست گیم چل رہی ھے

  • Patwari Judge Sahib, mehrbani kerian aur is terah ka gulna sarna awan ko ata ferma jahan heater aur airconditioner, tv aur khanay ke saath doctors ke sahulate majood hai… Durrrr Fetay monh chavela


  • Featured Content⭐


    24 گھنٹوں کے دوران 🔥


    From Our Blogs in last 24 hours 🔥


    >