کندھ کوٹ: لالچی چچا نے 7 لاکھ روپے کے بدلے زبردستی بھتیجی کی شادی کرا دی

کندھ کوٹ کے علاقے میں لالچی چچا نے سات لاکھ روپے کے عوض دو بچوں کی ماں بیوہ بھتیجی کی زبردستی بگٹی قبیلے کے نوجوان سے شادی کرادی، جس پر لڑکی تحفظ کے حصول کے لیے پولیس سٹیشن پہنچ گئی۔

واقعہ کچھ یوں پیش آیا کہ جب باراتی دلہن کو رخصتی کے بعد لے کر نواں کوٹ کے پولیس اسٹیشن کے آگے سے گزر رہے تھے تو دلہن شور مچا کر ٹریکٹر ٹرالی سے کود کر پولیس سٹیشن کے اندر جا پہنچی۔

دلہن کا پولیس سٹیشن کے اندر پہنچ کر پولیس والوں کو دیے گئے اپنے بیان میں کہنا تھا کہ وہ ایک بیوہ عورت ہے جس کے دو کم سن بیٹے ہیں اور شوہر انتقال کر چکا ہے، تاہم میرے چچا نے پیسوں کے لالچ میں میری شادی بگٹی قبیلے کے ایک نوجوان سے زبردستی کروا دی ہے۔

لڑکی کا کہنا تھا کہ میں یہ شادی نہیں کرنا چاہتی مجھے اپنی مرضی سے اپنے بچوں کے ساتھ رہنا ہے، پولیس نے لڑکی کا بیان ریکارڈ کرکے اپنی تحویل میں لے لیا جب کہ دلہا موقع سے فرار ہونے میں کامیاب ہو گیا اور دولہے کے ساتھ آئے باراتی پولیس سٹیشن کے باہر احتجاج کرتے رہے۔

بعد ازاں پولیس حکام کا کہنا تھا کہ خاتون کو کورٹ میں پیش کیا جائے گا، جہاں پر خاتون اپنا موقف پیش کرے گی جبکہ خاتون خود بھی عدالت کے سامنے پیش ہونے کی خواہش رکھتی ہے۔ تاہم خاتون کو فروخت کرنے والے اس کے چچا کی گرفتاری کے لیے بھی چھاپے مارے جا رہے ہیں۔


Featured Content⭐


24 گھنٹوں کے دوران 🔥


From Our Blogs in last 24 hours 🔥


>