وفاقی وزیر شبلی فراز ایف بی آر کے فیصلے سے ناخوش،فیصلہ چیلنج کر دیا

وفاقی وزیر شبلی فراز ایف بی آر کے فیصلے سے ناخوش فیصلہ چیلنج کر دیا

وفاقی بورڈ آف ریونیو(ایف بی آر) اور وفاقی وزیر اطلاعات شبلی فراز کے درمیان ٹھن گئی ہے اور دونوں ایک دوسرے کے سامنے آگئے ہیں۔

معاملہ ہے وفاقی وزیر شبلی فراز کے اثاثوں کا جن میں ایک بھاری مالیت کا تحفہ ہے جس پر ایف بی آر نے اعتراض لگایا کہ قانون کے مطابق شبلی فراز بھاری مالیت کے اثاثے کو تحفہ ظاہر نہیں کرسکتے۔

ایف بی آر نے اعتراض لگاتے ہوئے شبلی فراز کے اس اثاثے پر ٹیکس عائد کردیا جسے وفاقی وزیر نے کمشنراپیلز کے سامنے چیلنج کردیا ہے۔

شبلی فراز نے ٹیکس کو چیلنج کرتے ہوئے موقف اپنایا کہ یہ تحفہ مجھے میری بیوی نے دیا ہے میں 2014 سے اس اثاثے کو اپنے گوشواروں میں ظاہر بھی کررہا ہوں اس پر اب اعتراض بے وجہ ہے، ایف بھی آر کے اعتراض کے خلاف ہر قانونی فورم استعمال کروں گا۔

  • Husband and Wife can transfer assets to each other. nothing wrong in that

    FBR is wrong. once proven in court then they should be heavily fined.

    And also there should be punitive action against FBR for not making the rules clear


  • Featured Content⭐


    24 گھنٹوں کے دوران 🔥


    From Our Blogs in last 24 hours 🔥


    >