شیخ رشید کی وزیراعظم عمران خان سے مصافحہ کی خبروں پر وضاحت

شیخ رشید کی عمران خان سے مصافحہ کی خبروں کی وضاحت

وزیرداخلہ شیخ رشید سے قومی اسمبلی کے اجلاس میں وزیراعظم عمران خان نے مصافحہ کیا تھا یا نہیں سوشل میڈیا پر ایک ویڈیو وائرل ہورہی ہے جس میں دیکھا جاسکتا ہے کہ عمران خان تیزی میں آگے بڑھ جاتے ہیں اور شیخ رشید کا ہاتھ دیکھتے رہ جاتے ہیں، جیسے ہی ویڈیو وائرل ہوئی صارفین حسب روایت مذاق بنانے لگے۔

صارفین کی جانب سے گردش کرتی خبروں پر شیخ رشید نے ٹوئٹر پر مصافحہ کرنے کی تصاویر شیئر کرتے ہوئے بے بنیاد خبروں کی تردید کردی۔

وفافی وزیرداخلہ نے کہا کہ میں عمران خان سے پہلے ہی مصافحہ کرچکا تھا،بے بنیاد بات کو خبر بنانے کی پرزور مذمت کرتا ہوں،سوشل میڈیا اور بعض الیکٹرانک چینلز پر دکھایا گیا کہ قومی اسمبلی میں تقریر کے بعد وزیر اعظم ہاتھ ملائے بغیر گزر گئےلیکن ایسا بالکل نہیں ۔

وزیرداخلہ نے کہا کہ ایک غلط بات کی بنیادپر خبر بنانے کی کوشش کی گئی وزیر اعظم سے ایوان کے اندر بھی مصافحہ ہو چکا تھا اور اسمبلی کے اجلاس کے بعد بھی وزیر اعظم نے چیمبر میں اتحادی پارلیمانی لیڈروں کے ساتھ ملاقات کی تھی،ایک بے بنیاد بات کو خبر بنانے کی مزموم کوشش کی گئی جس کی میں پرزورتردید کرتا ہوں۔

وزیراعظم اتحادی جماعتوں کے رہنمائوں سے شکریہ ادا کرنے ان کی نشست پر گئے اور سب سے ہاتھ ملایا، ایم کیو ایم کے مقبول صدیقی سے ہاتھ ملانے کے بعد شیخ رشید سے ہاتھ ملائے بغیر وہ تیزی سے آگے نکل گئے اور شیخ رشید کا ہاتھ انکی طرف بڑھا ہی رہ گیا لیکن اگلے ہی لمحے وزیراعظم واپس مڑے اور ان سے ہاتھ ملایا تھا۔

بعد میں وزیراعظم نے نہ صرف شیخ رشید سے ہاتھ ملایا بلکہ پر پرجوش انداز میں ہاتھ ملایا،اپنی تقریر میں شیخ رشید نے کہا کہ میں کوئی ’’مالشیا وزیر‘‘ نہیں ہوں لیکن حکومت کے اچھے اقدامات اور وزیراعظم کے فیصلوں کی تعریف کرتا ہوں جس پر ایوان قہقہوں سے گونج اٹھا۔

  • اس حرام الدھر کے یہی الفاظ اس سے پہلے مشرف کے لیے تھے ، پھر نواز شریف کےلیے بھی اور
    اب بونگی کے لیے بھی اس نے وھی الفاظ دھرائیں ہیں ۔


  • Featured Content⭐


    24 گھنٹوں کے دوران 🔥


    From Our Blogs in last 24 hours 🔥


    >