ان کا بچہ کتنا کالا ہوگا ” برطانوی شاہی خاندان کی بہو میگھن مرکل کے انکشافات”

برطانوی شاہی خاندان کی بہو میگھن مرکل کے انٹرویو میں بکنگھم پیلس میں گزرے وقت سے متعلق چشم کشا انکشافات

امریکی اداکارہ اور برطانوی شاہی خاندان کی بہو میگھن مرکل نے اوپرا ونفرے کو دیئے گئے حالیہ انٹرویو میں بتایا کہ ان کا شاہی برطانوی شاہی خاندان کے ساتھ وقت اتنا اچھا نہیں گزرا، انہوں نے کہا کہ شاہی خاندان کا حصہ بننے کے بعد مجھے خاموش کرا دیا گیا تھا۔

میگھن نے انکشاف کیا کہ برطانوی شاہی خاندان کے ساتھ رہتے ہوئے انہیں اس قدر تعصب کا سامنا کرنا پڑا تھا کہ 5 مہینے کے حمل کے بعد شاہی محل میں یہ باتیں شروع ہو گئیں تھیں کہ ان کا بچہ کتنا کالا ہوگا۔ انہوں نے بتایا کہ ان کی وہاں کردار کشی ہوئی اور انہیں لگا کہ انہیں خود کشی کر لینی چاہیے۔

شہزادے ہیری کی اہلیہ میگھن مرکل کا کہنا تھا کہ شاہی خاندان سے متعلق عام خیالات اور حقیقت میں بہت فرق ہے۔ ملکہ برطانیہ سے پہلی ملاقات رسمی نہیں تھی، شاہی خاندان نے مشکل وقت میں ذہنی سکون کے لیے میری مدد نہیں کی۔ انہیں شاہی خاندان کی جانب سے تحفظ نہیں ملا۔

میگھن مرکل نے انکشاف کیا کہ ان کی اور ہیری کی شادی باضابطہ تقریب سے 3 دن پہلے ہوچکی تھی۔ انہوں نے بتایا کہ ان کے اور کیٹ میڈلٹن کے مابین ہونے والی بات پر وہ یہ کہنا چاہتی ہیں کہ وہ ان کی وجہ سے غمزدہ نہیں تھیں۔

ان کا کہنا تھا کہ اس معاملے کے درمیان وہی نشانہ بنی تھیں اور اس پر کیٹ نے ان سے معافی بھی مانگی تھی اور پھول بھی پیش کیے تھے اور اپنی غلطی بھی تسلیم کی۔ میگھن نے کہا کہ ان کی اپنی بھی ایک آواز اور مرضی تھی جسے نظر انداز کر کے ختم کیا جا رہا تھا۔

میگھن نے محل کے گھٹن زدہ ماحول سے متعلق کہا کہ انہیں یہاں انٹرویو دیتے ہوئے خوشی ہے کہ وہ آزادانہ طریقے سے بات کر رہی ہیں اور یہ کہ یہاں کوئی ان کی ٹوہ میں نہیں لگا ہوا۔


  • Featured Content⭐


    24 گھنٹوں کے دوران 🔥


    From Our Blogs in last 24 hours 🔥


    >