بھارت کے ساتھ بیک ڈور کوئی رابطہ نہیں ہوا، شاہ محمود قریشی

وفاقی وزیر خارجہ شاہ محمود قریشی نے کہا ہے کہ بھارت سے کسی بھی قسم کا بیک ڈور رابطہ نہیں ہورہا۔

ابوظہبی میں میڈیا نمائندوں سے گفتگو کرتے ہوئے مخدوم شاہ محمود قریشی کا کہنا تھا کہ میں بالکل واضح کردینا چاہتا ہوں کہ بھارت سے کسی بھی قسم کا بیک چینل رابطہ نہیں ہورہا،ہم کشمیر کے معاملے پر صرف نظر نہیں کرسکتے۔

انہوں نے مزید کہا کہ بیک چینل رابطے کرنے کی ضرورت کیا ہے، میز پر بیٹھیں ایک دوسرے کا سامنا کریں، ہم دونوں ممالک کے درمیان کشمیر، سرکریک اور پانی کے مسئلے ہیں یہ مذاکرات سے ہی حل ہوں گے، دو ایٹمی قوت ہمسایوں کے درمیان اس کے علاوہ کوئی اور آپشن خودکشی کے سوا کچھ نہیں ہوگا۔

شاہ محمود قریشی نے کہا کہ جہاں تک انٹیلی جنس روابط کی بات ہے تو یہ معمول کا حصہ ہے، دنیا بھر میں سیکیورٹی ایجنسیز آپس میں رابطے میں ہوتی ہیں یہاں تک کہ حالت جنگ میں بھی سیکیورٹی ایجنسیز ایک دوسرے سے رابطے میں ہوتی ہیں۔

وزیر خارجہ کا کہنا تھا کہ پاکستان خطے میں امن کا خواہاں ہیں ، ہم بشمول بھارت ہمسایوں کے ساتھ خوشگوار تعلقات کے خواہاں ہیں، ہم مذاکرات سے کبھی نہیں بھاگے بھارت آگے بڑھے مذاکرات کے ٹیبل پر بیٹھنے سے قبل کشمیر پر ڈھائے مظالم کا خاتمہ کرے، 5 اگست کے فیصلے کو ختم کرے تو مذاکرات ہوسکتے ہیں۔

ان کا مزید کہنا تھا کہ متحدہ عرب امارات کے وزیر خارجہ سے ملاقات میں پاکستان اور یو اے ای کے برادرانہ تعلقات کے 50 سال مکمل ہونے پر مختلف پروگراموں کو ترتیب دینے کی کوشش کررہے ہیں۔


Featured Content⭐


24 گھنٹوں کے دوران 🔥


From Our Blogs in last 24 hours 🔥


>