پاکستان نے امریکا کو ہونے والی ٹیکسٹائل برآمدات میں بھارت کو پیچھے چھوڑ دیا

وزیراعظم کے مشیر تجارت عبدالرزاق داؤد کا کہنا ہے کہ کورونا وائرس کے عرصے کے دوران پاکستان امریکا کو ٹیکسٹائل برآمدات کرنے والا واحد اور سب سے بڑا ملک بن گیا ہے۔

ٹیکسٹائل ملبوسات کی برآمدات پر نظر رکھنے والے ایک عالمی ادارے کے مطابق بھی پاکستان ٹیکسٹائل مصنوعات برآمد کرنے والے ممالک میں سب سے سرفہرست ہے۔

اس حوالے سے مشیر تجارت نے کہا کہ پاکستان نے ثابت کر دیا کہ ہم ٹیکسٹائل کی ڈیمانڈ پوری کرنے والا ایک قابل اعتماد کاروباری ملک ہیں۔ انہوں نے کہا کہ پہلے اس میدان میں بھارت اور بنگلہ دیش پاکستان سے آگے تھے مگر عالمی وبا کے دوران پیش معاشی چیلنجز کے دوران پاکستان کو یہ بڑی کامیابی ملی ہے۔

انہوں نے بتایا کہ پاکستان کے علاوہ چین بنگلہ دیش اور مصر بھی اس فہرست میں نمایاں رہے ہیں۔ عبدالرزاق داؤد کے مطابق چینی کمپنیوں نے پاکستان کے ساتھ مل کر اپنے بیشتر اہداف کو حاصل کیا ہے۔

مشیر تجارت نےمزید کہا کہ حکومت نے ٹیکسائل صنعت کے لئے جو پالیسیاں مرتب کیں ان کا برآمدات میں اضافے میں نمایاں کردار رہا ہے۔ ان کا کہنا تھا کہ ہمارا ویژن "میڈ اِن پاکستان” کو فروغ دینا ہے۔ تاہم ہمیں ابھی بھی اپنی کارکردگی کو برقرار رکھنے کے لئے بہت سی رکاوٹوں کا سامنا ہے کیونکہ کپاس کی پیداوار میں کمی کا سامنا بھی ہے۔

اطلاعات کے مطابق کپاس کی کم سے کم ایک کروڑ 20 لاکھ گانٹھوں کی پیش گوئی کے خلاف وزارت قومی فوڈ سکیورٹی اینڈ ریسرچ کو اس سال صرف 77 لاکھ کپاس کی گانٹھوں کی پیداوار کی توقع ہے۔ تاہم کاٹن جنرز ایسوسی ایشن نے اس سال کے لئے سب سے کم پیداوار کا تخمینہ صرف 55 لاکھ گانٹھوں کا لگایا ہے۔


  • Featured Content⭐


    24 گھنٹوں کے دوران 🔥


    From Our Blogs in last 24 hours 🔥


    >