معروف کمپنی نیسلے کی جعلی مارکیٹنگ،دھوکہ دہی؟سی سی پی کا کارروائی فیصلہ

معروف کمپنی نیسلے پر دھوکہ دہی کے الزام میں قانونی کارروائی کی جائے گی،مسابقتی کمیشن آف پاکستان (سی سی پی) نے نیسلے کیخلاف صارفین کودودھ کی تین مصنوعات کے حوالے سے جھوٹی اور گمراہ کن معلومات دینے پر قانونی کارروائی کا فیصلہ کرلیا ہے۔

سی سی پی نے نیسلے کے خلاف مزید کارروائی کے لئے انکوائری رپورٹ کو حتمی شکل دے دی ہے،اس رپورٹ میں انکشاف کیا گیا کہ مسز پیرنٹس پاکستان (ایس ایم سی-پرائیویٹ) لمیٹڈ (شکایت کنندہ) نے نیسلے کے خلاف سی سی پی کے پاس مسابقتی ایکٹ ، 2010 (سیکشن 10) کی دفعہ 10 کی خلاف ورزی پر جعلی مارکیٹنگ کے طریقہ کار پر الزام میں شکایت درج کروائی ہے۔

نیسلے کمپنی پر الزام عائد کیاگیا کہ کمپنی نے اپنی تین مصنوعات کی پیکیجنگ ، لیبلنگ ، ٹیلی ویژن کے اشتہارات ، اشتہارات ، سرکاری ویب سائٹ اور سوشل میڈیا پلیٹ فارم پر اس کے بیانات کی شکل میں معلومات تقسیم کیں،اس کی مصنوعات ، جو قابل اعتماد سائنسی اعداد و شمار کی حمایت نہیں کر رہی ہیں اور صارفین کو یہ باور کرنے میں گمراہ کررہی ہیں کہ مصنوعی دودھ ہے اور ، اسی طرح سے ، فریب کاری کی مارکیٹنگ تشکیل دیتی ہے۔

ابتدائی تحقیقات کے مطابق سی سی پی کے مجاز اتھارٹی نے انکوائری کمیٹی تشکیل دے کرانکوائری شروع کردی ہے۔ انکوائری کمیٹی کو ہدایت کی گئی تھی کہ وہ شکایت میں اٹھائے گئے معاملات پر انکوائری کرے اور اس کے نتائج اور سفارشات دے کر انکوائری رپورٹ پیش کرے۔

انکوائری کمیٹی کے مطابق دودھ اور دودھ کی مصنوعات کی مختلف اقسام کے بارے میں عام لوگوں کو گمراہ کیا گیا، انکوائری رپورٹ میں کہا گیا کہ کمپنی کو یقین ہے کہ یہ مصنوعی دودھ ہے،کمپنی نے ان مصنوعات کو بھی بغیر کسی مناسب بنیاد کے دودھ کا بہتر متبادل قرار دیا ،قدرتی دودھ کے مقابلے میں ان مصنوعات کی افادیت اور ضرورت پربھی مطالعہ کیا جارہا ہے۔

سی سی پی نے کہا کہ اس انکوائری رپورٹ کے نتائج کے مطابق کمپیٹیشن ایکٹ کے تحت خلاف ورزی کرنے پر کمپیٹیشن ایکٹ کے سیکشن 30 کے تحت کمپنی کے خلاف کارروائی کا آغاز کیا گیا ہے۔


  • Featured Content⭐


    24 گھنٹوں کے دوران 🔥


    From Our Blogs in last 24 hours 🔥


    >