عیدالفطر پر لگائے گئے لاک ڈاؤن کا تاجروں نے کیا توڑ نکالا؟

 عیدالفطر پر لگائے گئے لاک ڈاؤن کا تاجروں نے کیا توڑ نکالا؟

عیدالفطر کے موقع پر کورونا وائرس کے خطرے کے پیش نظر حکومت نے لاک ڈاؤن کا اعلان کرتے ہوئے تجارتی مراکز بند کیے تو تاجروں نے بھی اس پابندی کے باوجود اپنا روزگار کمانے کے متبادل طریقے ڈھونڈ کر اس لاک ڈاؤن کا توڑ نکال لیا ہے۔

چھوٹے کاروباری لوگ جن کے کاروبار بند ہونے سے ان کی عید پر آمدن متاثر ہونے کا خدشہ تھا انہوں نے اپنے سامان کی فروخت کیلئے چھوٹی گلیوں، بازاروں میں ٹھیلوں اور پتھاروں پر سامان فروخت کے لیے پیش کر دیا ہے۔

کئی علاقوں میں چھوٹے دکاندار اور تاجر عید پر استعمال کا سامان اپنے گھروں سے ہی فروخت کر رہے ہیں جس سے آمدن کا بڑا ذریعہ متاثر ضرور ہوا ہے مگر ان کی گزر بسر کا کام چل رہا ہے۔ اسی طرح درزی بھی گھروں میں سلائی کا کام جاری رکھے ہوئے ہیں۔

کراچی کی بات کی جائے تو تجارتی مراکز بند ہونے کے بعد کاسمیٹکس، کپڑے، جوتے، جیولری، مہندی سمیت دیگر اشیا جن چھوٹے گلیوں بازاروں میں فروخت ہو رہی ہیں اب خواتین کا رجحان اس طرف ہونے لگا ہے۔ اس طرح چیزوں کی بڑے نہ سہی چھوٹے پیمانے پر ہی دستیابی سے لوگ خوش ہیں۔

خبررساں ادارے کے مطابق کراچی شہر میں افطار کے بعد خریدار اب ان چھوٹے گلیوں بازاروں میں لگے پتھاروں اور ٹھیلوں کا رخ کرتے ہیں اور اپنی مطلوبہ چیزیں یہاں سے خریدتے ہیں۔

اس سلسلے میں آن لائن خرید و فروخت کے علاوہ مقامی سطح پر خریداروں کو اشیا کی خریداری کی سہولت دستیاب ہے اور سوشل میڈیا کو رابطے کے طور پر استعمال کرکے چھوٹے تاجر اور دکاندار اپنی گزر بسر کے لیے کاروباری سرگرمیاں جاری رکھے ہوئے ہیں۔


  • Featured Content⭐


    24 گھنٹوں کے دوران 🔥


    From Our Blogs in last 24 hours 🔥


    >