سعودی عرب کی جانب سے پاکستان میں زکوۃ الفطر پروگرام پر تنقید کی حقیقت کیا ہے؟

https://urdu.siasat.pk/news/2021-05-11/news-96224?fbclid=IwAR0qBmsLaKk9ieiYRd8AosIZgG6e_sq8HFwkV2NjSK75VNiHvQhVdKI0csE

سوشل میڈیا پر وزیراعظم عمران خان کے سعودی عرب دورہ کےدوران ایک خبر بہت شدت سے پھیلی کہ وزیراعظم نے اس دورے کے دوران سعودی عرب سے زکوۃ الفطر کی امداد حاصل کی ہے۔

سوشل میڈیا پر اس خبر کے وزن میں اضافے کیلئے ایک تصویر پیش کی جارہی ہے جو سعودی عرب کی کسی تقریب کی ہے اور اس میں وفاقی وزیر مواصلات مراد سعید شریک ہیں، پیچھے لگے بورڈ پر "افتتاحی تقریب برائے پاکستان کیلئے زکوۃ الفطر پروگرام 2021” کی تحریر بھی موجود ہے۔

سوشل میڈیا پر منفی پراپیگنڈہ کرنےو الے صارفین نے اس تصویر کو وزیراعظم عمران خان کے سعودی عرب دورے سے جوڑتے ہوئے دعویٰ کیا کہ وزیراعظم نے اس دورے کے دوران ولی عہد محمد بن سلمان سے زکوۃ الفطر کی مد میں امداد لی ہے۔

اب اس تصویر اور اس پروگرام کی حقیقت کی طرف آتے ہیں، سب سے پہلی بات ! تصویر میں موجود وفاقی وزیر مراد سعید صاحب وزیراعظم کے ساتھ دورہ سعودیہ کے وفد میں شریک ہی نہیں تھے، یہ تصویر اسلام آباد میں واقع سعودی سفارت خانے میں ہونے والی ایک تقریب کے دوران اتاری گئی تھی، لہذا اس کا وزیراعظم کے دورے سے دور دور تک کوئی تعلق نہیں ہے۔

دوسرا دعویٰ کہ سعودی عرب پاکستان کو زکوۃ کے فنڈ سے امداد دے رہا ہے اس کا جواب یہ ہے کہ یہ تقریب گزشتہ ہفتے اسلام آباد میں ہوئی جس کا انعقاد”شاہ سلمان انسانی امداد و ریلیف سینٹر”(کے ایس ریلیف” کے تحت کیا گیا تھا اور اس پروگرام میں غریب خاندانوں کے درمیان راشن تقسیم کیا گیا تھا۔

ایسا ہی ایک پروگرام بلوچستان میں اسی رمضان کے دوران شروع کیا گیا جس میں بلوچستان کے 10 اضلاع میں رہنے والے غریب خاندانوں میں 10 لاکھ ڈالر مالیت کے راشن بیگز تقسیم کیے جائیں گے۔

یہ پروگرام نیشنل ڈیزاسٹر مینجمنٹ اتھارٹی اور بلوچستان کی مقامی حکومت کے تعاون سے مکمل کیا جارہا ہے، اس منصوبے سے صوبے کے 1 لاکھ 24 ہزار سے زائد افراد رمضان المبارک کے بابرکت مہینے میں مستفید ہوسکیں گے۔

لہذازکوۃ الفطر پروگرام کے تحت راشن کی تقسیم کے منصوبے سعودی سفارت خانے کی جانب سے پاکستان میں مکمل کیے جارہے ہیں یہ امداد کسی صورت بھی ایک حکومت سے دوسری حکومت کو دی جانے والی امداد یا ریلیف نہیں ہے۔


  • Featured Content⭐


    24 گھنٹوں کے دوران 🔥


    From Our Blogs in last 24 hours 🔥


    >