بجٹ : ملکی دفاعی بجٹ میں کتنا اضافہ ہوا ؟

ملکی دفاعی بجٹ میں اضافہ، 1373ارب تک جا پہنچا

نئے مالی سال کیلیے تین ہزار چار سو بیس ارب خسارے کا بجٹ پیش کردیا گیا،آئندہ مالی سال 22-2021 کے بجٹ میں دفاعی امور اور خدمات کے بجٹ میں بھی اضافہ کردیا گیا،بجٹ دستاویز کے مطابق دفاعی امور اور خدمات کیلئے 1373.275 ارب روپے رکھے گئے ہیں۔

گزشتہ مالی سال 22-2021 کے بجٹ میں دفاع کا نظرثانی شدہ میزانیہ 1299.188 ارب روپے رکھا گیا تھا اور آئندہ مالی سال کے بجٹ میں دفاع کیلئے 74.087 ارب روپے کا اضافہ کیا گیا،بجٹ دستاویز کے مطابق دفاعی انتظامیہ کیلئے 3.275 ارب روپے مختص کیے گئے ،

جبکہ دفاعی خدمات کیلئے 1370 ارب روپے رکھے گئے ہیں جس میں سے ملازمین کے اخراجات کیلئے 481.592 ارب روپے، عملی اخراجات کیلئے 327.136 ارب روپے، مادی اثاثہ جات کیلئے 391.499 ارب روپے اور تعمیرات عامہ کیلئے 169.773 ارب روپے رکھے گئے ہیں۔

وفاقی بجٹ کا کل حجم آٹھ ہزار چار سو ستاسی ارب روپے ہے، ایف بی آر کی ٹیکس وصولی کا ہدف پانچ ہزار آٹھ سو انتیس ارب روپے مقرر، ٹیکسٹائل، فارما سوٹیکل، پلاسٹک، آئرن، اسٹیل اور انجینئرنگ اشیا سے منسلک انڈسٹیز کیلیے ڈیوٹیز میں رعایت کا اعلان کیا گیا ہے،

کیپیٹل گین ٹیکس میں کمی کا فیصلہ کیا،پندرہ سے کم کرکے ساڑھے بارہ فیصد کرنے کی تجویز کی گئی ہے، مختلف خدمات پر ٹیکس کی شرح آٹھ سے کم کر کے۔۔ تین فیصد کی جائے گی۔


  • Featured Content⭐


    24 گھنٹوں کے دوران 🔥


    From Our Blogs in last 24 hours 🔥


    >