اپوزیشن رکن کی جانب سے بوتل پھینکنے پر اسپیکر نے اجلاس ملتوی کردیا

قومی اسمبلی میں بدمزدگی ، اسپیکر قومی اسمبلی کا اجلاس ملتوی کر کے چلے گئے

تفصیلات کے مطابق اسپیکر قومی اسمبلی کی زیرصدارت اجلاس شروع ہوا تو ایک بار پھر اس وقت بدمزدگی دیکھنے میں آئی جب اپوزیشن رکن کی طرف سے حکومتی ارکان کی طرف سینی ٹائزر بوتل پھینکی گئی ۔ بوتل تحریک انصاف کے ایم این اے اکرم چیمہ کی آنکھ پر لگی۔

اسپیکر اسد قیصر نے یہ صورتحال دیکھتے ہوئے اجلاس ملتوی کردیا ۔ اسپیکر قومی اسمبلی کا کہنا تھا کہ جس نے بھی بوتل پھینکی ہے اسے ایوان سے نکالا جائے۔ بوتل کس نے ماری ہے؟ اسے سامنے لایا جائے۔

اسپیکر قومی اسمبلی کا کہنا تھا کہ جب تک اپوزیشن اور حکومت میں اتفاق نہیں ہوتا اجلاس نہیں ہوگا۔

اپوزیشن لیڈر شہباز شریف کی تقریر کے دوران حکومتی ارکان کا شور شرابہ جاری رہا جس پر شہباز شریف نے کہا کہ اگر ہماری تقریروں کو آرام سے سنا جاتا تو ہم بھی قائد ایوان کی تقریر آرام سے سنتے

وزیر مملکت برائے اطلاعات فرخ حبیب نے ٹویٹ کیا کہ حکومتی MNA اکرم چیمہ پر اپوزیشن نے بوتل ماری ہے جو انکی آنکھ میں لگی ہے جس سے وہ زخمی ہوگئے ہے۔ اپوزیشن ایوان میں شہباز شریف کی تقریر کے نام پر فزیکل حملوں پر اتر آئی ہے

اس پر صحافی فہیم اختر نے ردعمل دیا کہ واقعی مریم نواز گروپ چاہتا ہے ایوان کی کاروائی نہ چلے اور شہباز شریف تقریر نہ کرسکیں۔

  • گشتی فراری اور صفدرے کنجر کیُ کوشش ہے کہ کسی بھی طرح شہباز شریف کو ناکام بنا کر پارٹی کا سارا کنٹرول گشتی فراری صفدرے کنجر کے پاس آجائے


  • Featured Content⭐


    24 گھنٹوں کے دوران 🔥


    From Our Blogs in last 24 hours 🔥


    >