ماں کو قتل کرکے اس کے جسم کے ٹکڑے خود اور اپنے کتے کو کھلانے والے شخص کوسزا

ماں کو قتل کرکے اس کے جسم کے ٹکڑے خود اور اپنے کتے کو کھلانے والے شخص کوسزا

عدالت نے ماں کو گلا دبا کر قتل کرنے  کے بعد اس کی لاش کے ٹکڑے خود کھانے اور کتے کو کھلانے والے سنگ دل شخص کو 15 برس قید کی سزاسنادی ہے۔

خبررساں ادارے کی رپورٹ کے مطابق فرانسیسی عدالت نے 2019 میں پیش آنے والے ایک بھیانک کیس کا فیصلہ سنادیا ہے جس میں ملزم  البرٹو گومیزپر الزام تھا کہ اس نے نہ صرف اپنی حقیقی ماں کو قتل کیا بلکہ اس کےجسم کے ٹکڑے ٹکڑے کردینے کے بعد خود بھی وہ گوشت کھایا اور اپنے کتے کو بھی کھلایا۔

رپورٹ کےبعد پولیس کو اس واقعے کی خبر تب ہوئی جب فروری 2019 میں   البرٹو کے ایک دوست نے پولیس کو  اس کی والدہ کے مالی معاملات سے متعلق اطلاع دی، پولیس جب البرٹو کی والدہ  کے گھر پہنچی تو  اس گھر سے خاتون کی باقیات برآمد ہوئیں۔

ماں کو قتل کرکے اس کے جسم کے ٹکڑے خود اور اپنے کتے کو کھلانے والے شخص کوسزا

پولیس نے والدہ کو قتل کرنے کے الزام میں البرٹو کو گرفتار کرلیا ، دوران ٹرائل البرٹو پر نہ صرف والدہ کے قتل کے الزامات ثابت ہوئے بلکہ ہوشربا انکشاف بھی ہوا کہ اس نے والدہ کو گلا دبا کر مارا اور پھر  اس کی لاش کے ٹکڑ ے ٹکڑے  کیے ، اس نے یہ گوشت  خود بھی کھایا اور  بلکہ کچھ ٹکڑے اپنے کتے کو کھلانے کیلئے محفوظ بھی کرلیے۔

عدالت نے ملزم کو 15 برس قید اور  بھائی کی مالی معاونت کی مد میں 73 ہزار ڈالر جرمانہ بھی عائد کردیا ہے۔


  • Featured Content⭐


    24 گھنٹوں کے دوران 🔥


    From Our Blogs in last 24 hours 🔥


    >