آزاد کشمیر انتخابات: ایک ووٹر کیلئے ایک پولنگ اسٹیشن، خرچہ ایک لاکھ سے زائد

آزاد کشمیر انتخابات کے دوران مجموعی طور پر 7 ووٹرز ایسے ہیں جن کے ایک ووٹ پر ایک ایک لاکھ روپے سے زائد کے اخراجات آئیں گے۔

خبررساں ادارے کی رپورٹ میں بتایا گیا ہے کہ آزاد کشمیر انتخابات کے دوران 7 ووٹرز کیلئے7 پولنگ اسٹیشنز قائم کیے گئے ہیں اور ایک پولنگ اسٹیشن کا کم سے کم خرچ ایک لاکھ روپے سے زائد متوقع ہے۔

رپورٹ کے مطابق آزاد کشمیر کے حلقہ ایل اے40 کشمیر ویلی ون کے سات پولنگ اسٹیشنز ایک ایک ووٹر کیلئے قائم کیے گئے ہیں، گورنمنٹ پرائمری اسکول سعید آباد کراچی ایک خاتون ووٹر کیلئے، گورنمنٹ بوائز پرائمری اسکول تھانہ بلا خان جام شورو ایک خاتون ووٹر کیلئے، ڈسٹرکٹ الیکشن کمشنر دادو میں خاتون ووٹر کے لئے، ڈسٹرکٹ الیکشن کمشنر قلعہ سیف اللہ میں خاتون ووٹر کے لئے قائم کیا گیا ہے۔

اس کے علاوہ گورنمنٹ بوائز ماڈل اسکول تربت میں ایک مرد ووٹر کے لئے، گورنمنٹ بوائز ماڈل اسکول تربت میں ایک مرد ووٹر کے لئے جبکہ ڈسٹرکٹ الیکشن کمشنر آفس ٹنڈو اللہ یار میں ایک خاتون ووٹر کے لئے پولنگ اسٹیشن بنایا گیا ہے۔

ان سات پولنگ اسٹیشنز پر پولنگ عملہ اور تمام تر انتظامات ایک ایک ووٹر کیلئے منعقد کیے گئے ہیں جن پر ایک لاکھ فی پولنگ اسٹیشن کے حساب سے خرچہ آرہا ہے۔

واضح رہے کہ آزاد کشمیر اسمبلی کی 45 نشستوں کیلئے عام انتخابات میں کل32 لاکھ 20 ہزار793ووٹرز حصہ لیں گے، آزاد کشمیر کا سب سے بڑا حلقہ ایل اے 7 بھمبر ہے جہاں رجسٹرڈ ووٹرز کی تعداد1 لاکھ 12 ہزار ہے جبکہ سب سے کم ووٹرز والا حلقہ ایل اے43 ہے جہاں ووٹرز کی تعداد 2ہزار257 ہے۔


  • Featured Content⭐


    24 گھنٹوں کے دوران 🔥


    From Our Blogs in last 24 hours 🔥


    >