پولیس حملہ کیس میں اسد کھرل کے جسمانی ریمانڈ میں 2 دن کی توسیع

پولیس حملہ کیس میں اسد کھرل کے جسمانی ریمانڈ میں 2 دن کی توسیع

نجی ٹی وی چینل کے صحافی اسد کھرل کو پولیس پر حملہ کیس میں مزید 2 روز کے جسمانی ریمانڈ پر جیل بھیج دیا گیا ہے۔

خبررساں ادارے کی رپورٹ کے مطابق لاہور ماڈل ٹاؤن کچہری میں اسد کھرل کے خلاف پولیس پر حملے سے متعلق کیس کی سماعت ہوئی۔

سماعت میں پولیس نےاسد کھرل کو پیش کرتے ہوئے موقف اختیار کیا کہ ملزم چالاک اور ہوشیار ہیں اور دوران تفتیش ٹال مٹول سے کام لے رہے ہیں، ان سے سرکاری رائفل برآمد کرنی ہے لہذا مزید 8 روز کا جسمانی ریمانڈ دیا جائے۔

اس موقع پر اسد کھرل کے وکیل نے پولیس کی جانب سے ریمانڈ طلب کرنے کے موقف کی مخالفت کرتے ہوئے کہا کہ اسد کھرل کو بطور صحافی سپریم کورٹ کے حکم پر سیکیورٹی ملی تھی، پولیس نے چار روزہ ریمانڈ کے دوران اسد کھرل پر تشدد کیا ہے ان کے سیل میں پانی چھوڑا گیا ، ان کے کپڑے اتار کر انہیں سیل میں قید کیا گیا جہاں وہ نہ بیٹھ سکتے تھے نا ہی سو سکتے تھے۔

اسد کھرل کے وکیل نے کہا کہ ایک حساس انسان کے ساتھ ایسا سلوک کیا جارہا ہے پوری پولیس فورس ایک شخص کے خلاف اقدامات میں لگی ہوئی ہے۔ عدالت نے دونوں جانب سے دلائل سننے کے بعد اسد کھرل کے جسمانی ریمانڈ میں 2 روز کی مزید توسیع کرتے ہوئے انہیں دوبارہ جیل بھیجنے کے احکامات جاری کردیئے ۔

واضح رہے کہ 23 جولائی کو لاہور میں اسد کھرل کو پولیس پر حملہ کرنے کے الزام میں گرفتار کیا گیا تھا، دوران گرفتاری پولیس کو اسد کھرل کی جانب سے مزاحمت کا سامنا بھی کرنا پڑا، بعد ازاں دوران تفتیش اسد کھرل سے بھاری اسلحہ بھی برآمد ہوا تھا۔

ان پر پولیس افسر و کانسٹیبل کو یرغمال بنانے، فائرنگ ، سرکاری اسلحہ چھیننے جیسے الزامات عائد کیے گئے ہیں۔


Featured Content⭐


24 گھنٹوں کے دوران 🔥


From Our Blogs in last 24 hours 🔥


>