سیاحوں کا شمالی علاقوں کا رخ ،پیٹرول کی قیمت کو پر لگ گئے،700روپے فی لیٹر فروخت

خیبرپختونخوا میں پیٹرول کی قیمت کو پر لگ گئے،700روپے فی لیٹر فروخت

خیبرپختونخوا میں پیٹرول کی شدید قلت کا سامنا ہے،جس کی وجہ سے شہریوں کو بھی شدید مشکلات ہورہی ہے، سوات ، کالام سمیت دور دراز اضلاع میں زیادہ تر فلنگ اسٹیشن پچھلے کئی دنوں سے پیٹرول سےمحروم ہیں، جس کی وجہ سے شہری پیٹرول کے حصول کیلئے رل رہے ہیں،پیٹرول پمپس پر طویل قطاریں لگی ہوئی ہیں،صوبے میں جہاں پیٹرول نایاب ہوگیا،وہیں جہاں پیٹرول دستیاب ہے وہاں قیمت آسمان کو چھو گئی۔

عیدالاضحیٰ کے بعد سے سیاحوں نے شمالی علاقوں کا رخ کرلیا ہے،جہاں سیاحوں کی بڑی تعداد موجود ہے اور خبر سامنے آرہی ہے کہ سوات میں سیاحوں کی موجودگی کا فائدہ اٹھاتے ہوئے پیٹرول چار گنا زیادہ مہنگا بیچا جارہاہے، یعنی سوات میں موجود سیاح سات سو روپے فی لیٹر پیٹرول خریدنے پر مجبور ہیں۔

سوات کی خوبصورت وادی کالام کے نظاروں سے لطف اندوز ہونے کیلئے آنے والے ہزاروں سیاحوں کیلئے ٹوٹی پھوٹی سڑکیں اور ٹریفک جام کے مسائل اپنی جگہ لیکن فیول کی قلت نے بھی مزہ کرکرا کررکھا ہے،دوسری جانب گلگت بلتستان میں بھی پیٹرول کی کمی ہے،وزیر اعلی گلگت بلتستان نے پیٹرول کی قلت کا نوٹس لیتے ہوئےمتعلقہ حکام کو جلد از جلد اس مسئلہ حل کرنے کی ہدایت کردی۔


  • Featured Content⭐


    24 گھنٹوں کے دوران 🔥


    From Our Blogs in last 24 hours 🔥


    >