شکارپور میں ڈاکوؤں کیخلاف آپریشن میں کیوں ناکام ہوا؟ تہلکہ خیز انکشاف

شکارپور کے علاقے کچے میں ڈاکوؤں کے خلاف ہونے والے آپریشن میں ناکامی کی بڑی وجہ سامنے آگئی ہے، پولیس اہلکار کے ملوث ہونے کا انکشاف ہوا ہے۔

تفصیلات کے مطابق ایس ایس پی شکار پور نے ڈاکوؤں کے خلاف کچے میں کئے جانے والے آپریشن کو ناکام کرنے میں پولیس اہلکار کے ملوث ہونے کی تصدیق کر دی۔

ایس سی ایس پی شکار پور تنویر تینو نے انکشاف کیا ہے کہ پولیس اہلکار صلاح دین مہر پولیس کی نقل و حرکت کی پیشگی معلومات ڈاکوؤں کو فراہم کرتاتھا۔

ایس ایس پی کا مزید کہنا تھا کی ملوث پولیس اہلکار کو نوکری سے برطرف کر کے محکمانہ کارروائی شروع کر دی ہے۔

اس سے قبل شکارپور آپریشن کے دوران بھی یہ خبریں گردش کرتی رہیں کہ محکمہ پولیس میں کالی بھیڑیں موجود ہیں جو کہ پولیس کے بارے میں ڈاکوؤں کو پیشگی اطلاعات فراہم کرکےچوکنا کرتی رہی ہیں۔

شکارپور میں کچے کے علاقے گڑھی تیغو میں ڈاکوؤں کے خلاف گرینڈ آپریشن کے دوران تین پولیس اہلکار شہید جبکہ چھ زخمی ہوگئے تھے، دو اہلکاروں کی شہادت بکتر بند گاڑی میں گولیاں لگنے سے ہوئی تھی جس کے بعد پولیس کی کارکردگی پر سوالیہ نشان لگے۔


Featured Content⭐


24 گھنٹوں کے دوران 🔥


From Our Blogs in last 24 hours 🔥


>