کورونا میں مبتلا جسٹس قاضی فائز عیسیٰ طبیعت بگڑنے پر اسپتال منتقل

کورونا میں مبتلا جسٹس قاضی فائز عیسیٰ طبیعت بگڑنے پر اسپتال منتقل

سپریم کورٹ جج جسٹس قاضی فائز عیسیٰ کی طبیعت گزشتہ روز بگڑ گئی جس کے بعد ان کو ہسپتال منتقل کردیا۔

تفصیلات کے مطابق جسٹس قاضی فائز عیسیٰ کی طبیعت میں بہتری نہیں آسکی، ڈاکٹرز کی ہدایت پر ان کو قائداعظم ہسپتال منتقل کردیا گیا۔

قرنطینہ ہونے کے بعد سے جسٹس قاضی فائز عیسیٰ کا علاج گھر پر جاری تھا، ان کی طبیعت گزشتہ روز ناساز ہوگئی جس پر ڈاکٹرز نے 2 بار معائنہ کیا اور ہسپتال منتقل ہونے کی ہدایت کی جبکہ پاک فوج کے سینئر ترین ڈاکٹر نے بھی معائنے کے بعد ہسپتال منتقلی کا مشورہ دیا۔

ڈاکٹرز کا کہنا ہے کہ ان کی کھانسی کنٹرول نہیں ہو رہی اور بولتے ہوئے تکلیف کا سامنا ہے، انہیں گزشتہ رات اسکین کے لیے اسپتال بھی لے جایا گیا۔ جسٹس قاضی فائزعیسیٰ کی اہلیہ مسز سرینا عیسیٰ کی طبیعت بھی گزشتہ روز بگڑگئی تھی اور ڈاکٹرز نے ان کا بھی معائنہ کیا اور ان کو ڈرپ کے ذریعے 2 بار دوا دی گئی۔

گزشتہ روز جسٹس قاضی فائزعیسیٰ نے اڑھائی گھنٹے کا جوڈیشل کمیشن کا آن لائن اجلاس اٹینڈ کیا تھا، جس کے بعد ان کی طبیعت بگڑ گئی تھی۔

واضح رہے کہ 23 جولائی کو جسٹس قاضی فائز عیسیٰ اور ان کی اہلیہ مسز سرینا عیسیٰ کا کورونا ٹیسٹ مثبت آیا تھا جس کے بعد انہوں نے گھر میں قرنطینہ اختیار کر لیا تھا۔

    • He is agent of western powers and against all patriotic Pakistanis. It was because of his father that forced Quaid e Azam to declare that I have only khotay sakays in my pocket. Moreover, he hates local population. He is the only Hazra who has declared himself to be Sunni. He or his father both chose to marry Christian ladies.

      • He openly decided in favor of Sharifs in Hudabiya case despite presence of solid and undeniable evidence against Sharifs. Most probably Qazi Faiz laundered the same money he got from Sharif family to buy property in UK.

  • گٹر میں پیدا ہونے والے اس جج نما پمپ کو اللہ جلد از جلد گٹر برد کر کے سپریم کورٹ کو ایسے بد بودار گٹر سے پاگ کردے
    اللہ اس جلد از جلاد کسی۔ انجام تک پہچا آمین


  • Featured Content⭐


    24 گھنٹوں کے دوران 🔥


    From Our Blogs in last 24 hours 🔥


    >