آزادکشمیر مخصوص سیٹوں پر انتخابات: کس جماعت کو کتنی سیٹیں ملنے کی توقع ہے؟

آزاد کشمیر قانون ساز اسمبلی کی 8مخصوص نشستوں کیلئے پولنگ کل ہوگی، نو منتخب اراکین اسمبلی خفیہ رائے شماری کے ذریعے مخصوص نشستوں پر امیدواروں کا چناؤ کریں گے۔

آزادکشمیر الیکشن کے بعد ملنے والی سیٹوں کے اعدادوشمار کے مطابق تحریک انصاف کو 6 نشستیں ملنے کی توقع ہے جبکہ پیپلزپارٹی اور مسلم لیگ ن کو ایک ایک سیٹ ملنے کی امید ہے۔

تحریک انصاف کوعددی اکثریت کے باعث ٹیکنو کریٹ، علماء مشائخ اور اوورسیز کشمیریوں کی نشست باآسانی حاصل کرلے گی۔

خواتین کی 5 مخصوص نشستوں کیلئے 8 ووٹوں کا پینل تشکیل دئیے جانے کاامکان ہے۔

مخصوص نشستوں پر ووٹنگ کا عمل مکمل ہونے کے بعد تحریک انصاف کی ممکنہ نشستیں 26 سے بڑھ کر 32، مسلم لیگ ن اور پیپلزپارٹی کو ایک نشست ملنے کے بعد انکی نشستوں کی کل تعداد بالترتیب 7 اور 12 ہوجائے گی۔

مخصوص نشستوں کے انتخابات کے بعد 3 اگست کو 9منتخب اراکن اسمبلی رکنتی کا حلف اٹھائیں گے، 53 کا ایوان مکمل ہونے پر اسپیکر اور ڈپٹی اسپیکر کا انتخاب ہوگا۔

موجودہ اسپیکر شاہ غلام قادر نئے اسپیکر کے انتخاب کیلئے پولنگ کروائیں گے، جس کے بعد نومنتخب اسپیکر حلف اٹھانے کے بعد ڈپٹی اسپیکر کا انتخاب کروائیں گے۔

اسپیکر الیکشن میں تحریک انصاف کے 31 جبکہ اگر اپوزیشن متحد ہوتی ہے تو انہیں 21 ووٹ ملنے کا امکان ہے ۔ توقع یہ ظاہر کی جارہی ہے کہ مسلم کانفرنس اور جموں کشمیر پیپلزپارٹی کا امیدوار تحریک انصاف کو ووٹ دے گا۔

مخصوص نشستوں پر انتخابات کے بعد وزیراعظم آزاد کشمیر کے انتخاب کیلئے سیکرٹری اسمبلی شیڈول جاری کریں گے۔ وزیراعظم آزادکشمیر کا انتخاب اس دن یعنی 3 اگست ہونے کا امکان ہے وگرنہ اگلے دن 4 اگست کو ہوگا۔

وزیراعظم آزادکشمیر کیلئے بیرسٹرسلطان محمود، سردار تنویرالیاس، خواجہ فاروق کے نام سامنے آرہےہیں۔


Featured Content⭐


24 گھنٹوں کے دوران 🔥


From Our Blogs in last 24 hours 🔥


>