وفاقی کابینہ کا پاک بحریہ اور فضائیہ سے نیشنل پارک میں تجاوزات خالی کرانے کا فیصلہ

وزیراعظم عمران خان کی زیر صدارت وفاقی کابینہ کا اجلاس ہوا جس میں ایک بار پھر اپوزیشن کو بات چیت کی دعوت دی گئی مگر اس عزم کا بھی اعادہ کیا گیا ہے کہ نوازشریف، فضل الرحمان، الطاف حسین اور مریم نواز سے کوئی سمجھوتہ یا بات چیت نہیں کی جا سکتی کیونکہ وہ پارلیمان کا حصہ نہیں ہیں۔

اجلاس میں کہا گیا کہ ان تمام افراد کو تو اپنی پارٹی کی سربراہی کرنے کا بھی حق نہیں پہنچتا، تاہم وزیراعظم نے ہدایت کی کہ الیکشن کمیشن کے 2 ارکان کی تقرری کے لیے اپوزیشن لیڈر شہباز شریف سے رائے لی جائے اور اس مقصد کے لیے انہیں باقاعدہ خط لکھا جائے۔

اجلاس کے دوران وفاقی دارالحکومت کے سیکٹر ای ایٹ اور ای نائن میں تجاوزات کو ہٹانے کے حوالے سے کابینہ کو بریفنگ دی گئی۔ کابینہ نے اس عزم کا اعادہ کیا کہ نیشنل پارک میں کسی قسم کی تجاوزات کی اجازت نہیں دی جائے گی اور اس حوالے سے بلاتفریق و امتیاز قانون کا نفاذ یقینی بنایا جائے گا۔

وزیراعظم نے ایک مرتبہ پھر سخت احکامات جاری کئے ہیں کہ اسلام آباد کے اندر گرین ایریاز کو ہر صورت تحفظ فراہم کیا جائے، اس میں گرین ایریاز میں تجاوزات چاہے جن اداروں کی طرف سے قائم کی گئی ہیں، انہیں پیچھے ہٹایا جائے، نیول فورسز، فضائیہ، پولیس سمیت دیگر سرکاری اداروں کو کہا گیا ہے کہ وہ گرین ایریاز سے اپنی تجاوزات کو پیچھے ہٹائیں۔

طاقتور ترین لوگوں کی جانب سے قائم کی جانے والی تجاوزات کے خلاف وزیراعظم نے سختی سے ہدایت کی ہے کہ ہم اسلام آباد کے اصل گرین ایریاز کو بحال کر رہے ہیں، تجاوزات کے خلاف کارروائی کسی امتیاز کے بغیر جاری رہے گی۔ انہوں نے بتایا کہ مونال ریسٹورنٹ کے قریب نیشنل پارک کے اندر تعمیرات کی اطلاعات موصول ہوئی ہیں، اگر ایسی تجاوزات ہوئیں تو انہیں گرا دیا جائے گا، وزیراعظم نے اس ضمن میں علی نواز اعوان کو ذمہ داری سونپی ہے۔

وفاقی وزیر فواد چودھری نے پریس بریفنگ کے دوران کہا کہ اس حوالے سے پولیس کو بھی ہدایت کی ہے کہ وہ گرین ایریاز سے اپنی چیک پوسٹس کو ہٹائیں، نہ صرف یہ بلکہ سینٹورس مال کی انتظامیہ کو بھی کہا گیا ہے کہ وہ بھی اپنے تجاوزات کو ختم کریں۔

واضح رہے کہ سینٹورس مال سردار تنویر الیاس کی ملکیت ہے جو کہ تحریک انصاف کے اہم رہنماؤں میں سے ہیں اور ممکنہ طور پر آزاد کشمیر انتخابات کے نتیجے میں وہاں وزارت عظمیٰ کے امیدواروں کی فہرست میں بھی شامل ہوں گے۔


  • Featured Content⭐


    24 گھنٹوں کے دوران 🔥


    From Our Blogs in last 24 hours 🔥


    >