ملک میں جاری کامیاب جوان پروگرام کا آئی ایم ایف بھی معترف

عالمی مالیاتی فنڈز (آئی ایم ایف) نے پاکستان میں نوجوانوں کو باصلاحیت بنانے اور روزگار کی فراہمی کے پروگرام کامیاب جوان پروگرام پر مکمل اظہار اطمینان کرتے ہوئے منصوبے کی شفافیت کو سراہا۔

آئی ایم ایف کے نمائندے ٹریسا ڈبن سنچے نے معاون خصوصی عثمان ڈار سے ملاقات کی، ملاقات کے دوران منصوبے کے اعداد وشمار اور پلاننگ کے تحت قرض کی تقسیم کے طریقہ کار کا معائنہ کیا گیا۔

کامیاب جوان پروگرام کے سربراہ معاون خصوصی عثمان ڈار نے آئی ایم ایف کے نمائندے کو ڈیجیٹل ڈیش بورڈ پر آنے والے اعداد و شمار سے متعلق بریفنگ دی۔ انہوں نے بتایا کہ کہ پاکستان کی کل آبادی کا 68 فیصد حصہ نوجوانوں پر مشتمل ہے

اورتقریباً 20 لاکھ نوجوان ہر سال جاب مارکیٹ میں داخل ہوتے ہیں۔ نوجوانوں کو بڑی تعداد میں روزگار کے مواقع دینا بڑا چیلنج تھا تاہم یہ پروگرام نوجوانوں کو بااختیار اور روزگار کی فراہمی میں معاون ثابت ہوا۔

عثمان ڈار کا کہنا تھا کہ کامیاب جوان پروگرام سے ہزاروں نوجوان ذاتی کاروبار اور روزگار حاصل کر چکے ہیں، پروگرام میں میرٹ اور شفافیت پر کسی قسم کا سمجھوتہ نہیں ہو سکتا۔ نوجوانوں کو اسکلز اسکالر شپ اور ہائی ٹیک کورسز سے ہم آہنگ کر کے فنی نوجوانوں کو مارکیٹ میں لایا جا رہا ہے۔ آئی ایم ایف نمائندے نے پروگرام کے تحت نوجوانوں کے لیے کیے گئے حکومتی اقدامات پر اظہار اطمینان کیا۔ حکومتی اقدامات اور ویژن کو بھی سراہا۔

آئی ایم ایف کے نمائندے نے پورٹل پر قرض کے اعداد و شمار پر تفصیلی معلومات میں بھی دلچسپی کا اظہار کیا۔ جب کہ نوجوانوں کو لون اسکیم پر معلومات تک رسائی دینے کی اہمیت پر بھی زور دیا گیا۔


  • Featured Content⭐


    24 گھنٹوں کے دوران 🔥


    From Our Blogs in last 24 hours 🔥


    >