واٹر ٹینکر حادثے میں 2 بھائیوں کی ہلاکت : ڈرائیور کے انکشافات


کراچی میں واٹر ٹینکر کی ٹکر سے 2 بھائیوں کی جان کا ذمہ دار ڈرائیور کا کہنا ہے کہ کہ میں نے پہلے کبھی ہیوی گاڑی نہیں چلائی، پہلی بار چانس ملا تھا تو ٹینکر چلارہا تھا۔

خبررساں ادارے کی رپورٹ کے مطابق کراچی کے علاقے نارتھ کراچی میں واٹر ٹینکر کے حادثے میں 2 بھائیوں کی موت واقع ہوگئی تھی حادثے کے بعد اہل علاقہ نے ٹینکر کے ڈرائیور کو پکڑ کر پولیس کے حوالے کردیا تھا۔

خبررساں ایجنسی کے مطابق بڑا بھائی چھوٹے بھائی کو مدرسے چھوڑنے جا رہا تھا کہ حادثہ پیش آیا۔

دوران تفتیش شکیل نامی ڈرائیور نے انکشاف کیا کہ میری عمر 20 برس ہے، میرا شناختی کارڈ بن چکاہے مگر ڈرائیونگ لائسنس نہیں بنا، میں نے پہلے کبھی کوئی ہیوی وہیکل بھی نہیں چلائی، اسی واٹر ٹینکر پر چانس ملا تھا جسے آج کل چلارہاتھا۔

ملزم نے پولیس کو بیان دیا کہ میں ایک گلی سے ٹینکر ریورس کررہا تھا کہ موٹر سائیکل ٹینکر کے نیچے آگئی، اسی اثنا ء میں دونوں بھائی بھی ٹینکر کے نیچے گھس گئے۔

پولیس کے مطابق واقعہ ٹینکر ڈرائیور کی غفلت کے باعث پیش آیا۔

  • جو ٹینکر کا مالک یا ٹھیکدار تھا جس نے بغیر لائسنس کے نوکری دی اس پر بھی ڈرائیور کےُ ساتھ ہی قتل کا مقدمہ چلنا چاہئے


  • Featured Content⭐


    24 گھنٹوں کے دوران 🔥


    From Our Blogs in last 24 hours 🔥


    >