مودی سرکار کا سید علی گیلانی کے خاندان کے خلاف مقدمہ، وزیراعظم کا سخت ردعمل

وزیراعظم عمران خان نے معتبر کشمیری حریت رہنما سید علی گیلانی کے جسد خاکی کو قابض بھارتی فوج کی جانب سے چھینے جانے کی سخت الفاظ میں مذمت کی ہے۔

تفصیلات کے مطابق عمران خان نے سماجی رابطے کی ویب سائٹ ٹوئٹر پر کہا کہ سید علی گیلانی کی میت ان کے ورثا سے چھینے جانا غلط عمل ہے اور ان کے اہلخانہ ہی کے خلاف مقدمات کا اندارج بھارتی فاشزم کی شرمناک مثال ہے۔

وزیراعظم عمران خان نے اپنے ٹویٹ میں مزید کہا کہ 92 سالہ کشمیری لیڈر سید علی گیلانی قابل احترام اور اصول پسند تھے۔ انہوں نے بھارت کے اس عمل پر کہا کہ بھارت کی موجود بی جے پی حکومت نازی اور آر ایس ایس کا مجموعہ ہے۔

یاد رہے کہ مقبوضہ کشمیر میں قابض بھارتی انتظامیہ نے سید علی گیلانی کے جسد خاکی کو پاکستانی پرچم میں لپیٹنے اور آزادی کے حق میں نعرے لگانے پر لواحقین کے خلاف ایف آئی آر درج کر لی ہے۔

سید علی گیلانی کی وفات کے بعد بٹگام پولیس اسٹیشن میں درج کیے گئے مقدمے میں الزام لگایا گیا ہے کہ سید علی گیلانی کے اہلخانہ نے دیگر عناصر کے ساتھ ملکر ملک مخالف نعرے لگائے۔

پولیس نے سید علی گیلانی کے اہلخانہ کے خلاف کالے قانون کی دفعہ 154A کے تحت درج کیا ہے۔


Featured Content⭐


24 گھنٹوں کے دوران 🔥


From Our Blogs in last 24 hours 🔥


>