مظفر گڑھ میں خاتون سب انسپکٹر جنسی زیادتی کا شکار

مظفرگڑھ میں خاتون محافظ کی عصمت دری کا دل دہلادینے والا واقعہ سامنے آگیا، تھانہ صدر کی خاتون سب انسپکٹر سے زیادتی کی گئی،خاتون پولیس افسر گزشتہ روز تھانہ صدر میں جینڈر کرائمز کی تفتیس کیلئے رکشے میں جارہی تھی۔

کار سوار ملزم نے مبینہ طور پر اسلحے کے زور پر اغواء کیا،چمن بائی پاس کے قریب باغات میں لے جاکرمبینہ زیادتی کا نشانہ بنایا۔

متاثرہ خاتون کو زخمی حالت میں اسپتال منتقل کیاگیا۔

میڈیکل کے بعد پولیس نے اغوا، تشدد اور زیادتی کا مقدمہ درج کرکے ملزم کاشف کو گرفتار کرلیا،واقعے میں استعمال گاڑی بھی قبضے میں لے لی گئی۔

پولیس کے مطابق کاشف نامی مسلح ملزم لیڈی انسپکٹر کو چمن بائی پاس کے قریب باغات میں لے گیا جہاں اس نے انسپکٹر کو زیادتی اور تشدد کا نشانہ بنایا، بعد ازاں ملزم زخمی لیڈی انسپکٹر کو موقع پر چھوڑ کر فرار ہوگیا۔

دوسری جانب آئی جی پنجاب نے واقعے کا نوٹس لیتے ہوئے آر پی او ڈیرہ غازی خان سے واقعے کی رپورٹ طلب کرلی۔ آئی جی پنجاب نے گرفتار ملزم کے خلاف سخت قانونی کارروائی کا حکم دیا ہے۔

پنجاب میں خاتون کو ہراساں کرنے اور ریپ کیسز میں مسلسل اضافہ ہورہاہے،لاہور میں خاتون نے پی آئی سی کے ڈاکٹر پر بلیک میلنگ اور زیادتی کا مقدمہ درج کرادیا، خاتون کا کہنا ہے کہ ڈاکٹر عامر بلیک میل کرکے تین سال تک زیادتی کا نشانا بناتا رہا، ادھر عارف والا کے نواحی گاؤں میں بیس سالہ لڑکی ریپ کا نشانہ بنی، پولیس نے مقدمہ درج کرکے ملزم کی تلاش شروع کردی۔

عارف والا کے نواحی گاؤں میں بیس سالہ لڑکی کو زیادتی کا نشانہ بنایا گیا،پولیس نے اہل خانہ کی درخواست پر ملزم کے خلاف مقدمہ درج کرلیا،متاثرین نے مطالبہ کیا ہے۔۔ کہ ملزم کو فوری گرفتارکرکے سخت سے سخت سزا دی جائے۔


  • Featured Content⭐


    24 گھنٹوں کے دوران 🔥


    From Our Blogs in last 24 hours 🔥


    >