جائیداد کا تنازعہ، اسکول ٹیچر نے سگے بھائی کی قبر کو آگ لگادی

سندھ کے علاقے کندھ کوٹ میں ایک اسکول ٹیچر نے جائیداد کے تنازعے پر سگے بھائی کی قبر کو آگ لگادی ہے۔

خبررساں ادارے کی رپورٹ کے مطابق افسوسناک واقعہ اندرون سندھ کے علاقے کندھ کوٹ میں رونما ہوا جس میں حبیب اللہ سومرو نامی ایک اسکول ٹیچر نے جائیداد کے تنازعے پر بھائی کی قبر کوپیٹرول چھڑک کر آگ لگادی ہے۔

رپورٹ کے مطابق ایس ایس پی کندھ کوٹ نے واقعے کا نوٹس لیتے ہوئے متعلقہ حکام سے فوری رپورٹ طلب کرلی ہے۔

پولیس کے مطابق واقعے میں ملوث ملزم کو گرفتار کرلیا گیا ، ملزم حبیب اللہ ایک اسکول ٹیچر ہے، ملزم نے بھائی کی وفات کے بعد اس سے اپنی نفرت کا اظہار کرنے کیلئے اس کی قبر کو آگ لگائی۔

پولیس کا کہنا ہے کہ ملزم کے خلاف مقدمہ درج کرلیا گیا ہے واقعے کے تمام پہلوؤں کا جائزہ لیتے ہوئے تفتیش کو آگے بڑھائیں گے۔

قبر کی بے حرمتی کا ایک اور واقعہ 14 اگست کو ٹھٹھہ میں پیش آیا تھا جہاں ملزم نے ایک قبر سے 14 سالہ بچی کی لاش کو نکال کر اس کے ساتھ بے حرمتی کی اور لاش کو جھاڑیوں میں پھینک کر فرار ہوگیا۔

واقعے کے تھوڑی دیر بعد ملزم کو گرفتار کرلیا گیا اور بعد ازاں ایک مبینہ پولیس مقابلے میں لاش کی بے حرمتی کرنے والا ملزم جاں بحق ہوگیا تھا۔


Featured Content⭐


24 گھنٹوں کے دوران 🔥


From Our Blogs in last 24 hours 🔥


>