سانحہ مہران ٹاؤن میں فیکٹری مالک کی ضمانت منسوخ، پولیس نے گرفتار کرلیا

سانحہ مہران ٹاؤن میں فیکٹری مالک کی ضمانت منسوخ، پولیس نے گرفتار کرلیا

مہران ٹاؤن سانحے کے کیس میں عدالت نے فیکٹری کے مالک سمیت دیگر ملزمان کی عبوری ضمانت منسوخ کردی ہے جس کے بعد پولیس نے ملزمان کو فرار ہونے کے باوجود گرفتار کرلیا ہے۔

خبررساں ادارے کی رپورٹ کے مطابق کراچی کے علاقے کورنگی مہران ٹاؤن میں کیمیکل فیکٹری میں آتشزدگی سے 17 مزدوروں کی ہلاکت سے متعلق کیس کی سماعت ہوئی، دوران سماعت عدالت نے کیس کے ملزمان فیکٹری کے مالک حسن میتھا، منیجر عمران زیدی اور بلڈنگ کے مالک فیصل طارق کی عبوری ضمانت منسوخ کرنے کے احکامات جاری کیے۔

ملز م عبوری ضمانت منسوخ ہوتے ہی پولیس کو چکما دیتے ہوئے عدالت سے فرا ر ہونے میں کامیاب ہوگیا تھا تاہم پولیس نے بروقت کارروائی کرتے ہوئے ملزم کو گرفتار کرلیا ۔ اس سے قبل کورنگی انویسٹی گیشن پولیس نے بلڈنگ کے مالک فیصل طارق کو بھی حراست میں لے لیا تھا۔

یادرہے کہ مہران ٹاؤن سانحے کے بعد 28 اگست کو سرکار کی مدعیت میں کورنگی انڈسٹریل ایریا کے پولیس اسٹیشن میں مقدمہ درج کیا گیا تھا، مقدمے کے مطابق فیکٹری میں ہنگامی طور پر باہر نکلنے کیلئے کوئی راستہ نہیں بنایا گیا ، بالائی منزل پر جانے کیلئے ایک ہی راستہ تھا جس پر تالا لگایا گیا تھا، فیکٹری میں فائر الارم یا آگ بھجانے والے آلات کی سہولیات بھی موجود نہیں تھیں۔

پولیس نے مقدمہ درج کرکے تفتیش کا آغاز کردیا تھا ،دوران تفتیش فیکٹری کے چوکیدار کا بیان بھی قلمبند کیا گیا، پولیس نے مقدمے میں بلڈنگ کے مالک، فیکٹری مالک اور منیجر کو ملزم نامزد کیا تھا۔


Featured Content⭐


24 گھنٹوں کے دوران 🔥


From Our Blogs in last 24 hours 🔥


>