پاک فوج نے شدید برفباری میں پھنسے نجی یونیورسٹی کے 22 طلبا کو ریسکیو کرلیا

پاک فوج نے شدید برفباری اور لینڈ سلائڈنگ کے باعث پھنسنے والے لمز کے 22 طلبا کو نکال لیا۔
آئی ایس پی آر کے مطابق لمز کے 22 طلبا 5 روز سے گلگت کے علاقے رتو میں شدید برفباری کی وجہ سے پھنسے ہوئے تھے جن میں 13 لڑکے اور 9 لڑکیاں شامل ہیں،

پاک فوج کے ہیلی کاپٹر کے ذریعہ طلبا کو رتو سے ریسکیو کرکے راولپنڈی پہنچایا گیا
آئی ایس پی آر کے مطابق لمز کے طلبا گلگت میں اسکیننگ کیلئے گئے ہوئے تھے جب کہ لمز انتظامیہ نے مدد کے لیے پاک آرمی سے رابطہ کیا تھا، آرمی چیف نے ان طلبا کو فوری طور پر ہیلی کاپٹر کے ذریعہ ریسکیو کرنے کی ہدایت کی تھی۔

پاک فوج کا وادی نیلم، گلگت، بلوچستان کے برفباری سے متاثرہ علاقوں میں امدادی سرگرمیوں سمیت ریسکیو اور ریلیف آپریشنز جاری ہے۔
یاد رہے کہ بلوچستان، گلگت اور آزاد کشمیر کے مختلف علاقوں میں شدید برفباری کے باعث اب تک 100 سے زائد شہری زندگی کی بازی ہار چکے ہیں۔
پاک فوج کے شعبہ تعلقات عامہ (آئی ایس پی آر) کے مطابق آرمی ہیلی کاپٹر کے ذریعے امدادی سامان متاثرین تک پہنچایا گیا۔ متاثرین کوخیمے کمبل، راشن، ادویات اور تیار کھانا فراہم کیا گیا


  • 24 گھنٹوں کے دوران 🔥

    View More

    From Our Blogs in last 24 hours 🔥

    View More

    This website uses cookies to improve your experience. We'll assume you're ok with this, but you can opt-out if you wish. Accept

    >