چینی اسکینڈل: سٹے بازوں  کے انکشافات کا سلسلہ جاری

چینی اسکینڈل میں منظر عام پر آنے والے سٹے بازوں کی جانب سے انکشافات کا سلسلہ جاری ہے۔

خبررساں ادارے کی رپورٹ کے مطابق تازہ ترین انکشافات کے مطابق پاکستان شوگر گروپ، تاندلیانوالہ شوگر ملز اور چینی کے بروکرز واٹس ایپ گروپس کے ذریعے سٹے بازی کرتے ہیں۔

رپورٹ کے مطابق سٹے باز مولوی ظہیر اور محمود اختر بھلی نے انکشاف کیا ہے کہ تمام شوگر ملز اور بروکرز کے درمیان فارورڈ ٹریڈنگ کا کام چلتا ہے، جس میں تاندلیانوالہ شوگر ملز، جے ڈی ڈبلیو گروپ،شوگر مرچنٹس ، بروکرز اور سٹے باز سب ملوث ہیں۔

محمود اختر بھلی نے انکشاف کیا کہ فارورڈ بکنگ پر سٹے بازی میں سرفہرست جے ڈی ڈبلیو کا گروپ ہے جبکہ ایک ماہ کی فارورڈ بکنگ پر تاندلیانوالہ شوگر ملز سٹہ کھیلتی ہے، شوگر ملز کے کہنے کچے کھاتے بنائے جاتے ہیں اور بے نامی اکاؤنٹس میں رقوم بھی منتقل کی جاتی ہیں۔

مولوی ظہیر نے انکشاف کیا کہ حمزہ شوگر،سویرا شوگرملز، المعیز شوگر ملز، مدینہ شوگر ملز کے فارورڈ ٹریڈنگ اور سٹہ بازی میں ملوث ہیں اور سٹہ بازی میں ملوث شوگر ملز ایک بوری کی قیمت کو 150 سے 200 روپے بڑھادیتے ہیں۔


  • Featured Content⭐


    24 گھنٹوں کے دوران 🔥


    From Our Blogs in last 24 hours 🔥


    >