نرگس کو حاجی نرگس بنانے گئے تھے باجی بنا کر واپس آگئے

وزیر اطلاعات فیاض الحسن چوہان کی نجی زندگی کے بارے میں دلچسپ انکشافات

۔

ایک نجی ٹی وی شو کے دوران پنجاب حکومت کے وزیر اطلاعات فیاض الحسن چوہان کی نجی زندگی کے بارے میں دلچسپ انکشافات ہوئے ۔

 

پروگرام کے میزبان سہیل وڑائچ نے ان سے پوچھا کہ کیا وجہ ہے کہ وہ اپنے بیانات کی وجہ سے حکومت کے اندر اور باہر ہوتے رہتے ہیں جس پر ان کا کہنا تھا کہ جب وہ نئے نئے وزیر بنے توانہیں اتنا اندازہ نہیں تھا کہ کیمرے ہر وقت ان پر ہوتے ہیں، اور انکا بطور وزیر کہا ایک ایک لفظ اہمیت رکھتا ہے اس لیے ان سے ایسے الفاظ بھی نکل گئے جو انہیں نہیں کہنے چاہیئں تھے اس کے علاوہ ان کا کہنا تھا کہ میڈیا نے بھی ان کے کچھ بیانات کو سیاق و سباق سے ہٹ کر بیان کیا ۔

 

سٹیج اداکارہ نرگس اور میگھا کے بارے میں بھی اپنےمتنازعہ بیانات کا ذکر کرتے ہوئے وہ ہنسں کر کہنے لگے کہ وہ نرگس کو حاجی نرگس بنانے گئے تھے اور باجی بنا کر واپس آگئے۔

 

اس کے علاوہ شو کے دوران یہ بھی انکشاف ہوا کہ فیاض الحسن چوہان نے دو شادیاں کر رکھی ہیں دوسری شادی ان کی اس وقت ہوئی جب 2002 میں ایم پی اے بنے تھے ۔

ان کا کہنا تھا کہ بطور ایم پی اے ایک کالج کے فنکشن میں گئے تھے تو انہیں وہاں پرحمیرا پسند آگئیں، اور اس کے بعد دونوں نے جلد ہی محبت کی شادی کرلی ۔

دوسری شادی سے فیاض الحسن چوہان کی چار بیٹیاں ہیںجب سہیل وڑائچ نے ان سے بیٹے کی خواہش کے بارے میں سوال پوچھا تو انہوں نے کہا کہ میں نے ہر بیٹی کا استقبال کھلے دل سے کیا ہے حالانکہ میری بیوی ڈری ہوئی تھیں لیکن میں نے کبھی انہیں احساس نہیں ہونے دیا کہ مجھے بیٹیوں کے آنے کا غم ہے ان کا کہنا تھا کہ جب میری چوتھی بیٹی پیدا ہوئی تو میں نے خود دیگ اپنے ہاتھوں سے لوگوں میں تقسیم کی اور اپنے ملازم سے کہا کہ وہ ہر گھر میں جا کر بتائے کہ فیاض الحسن چوہان کے گھر چوتھی بیٹی کی پیدائش ہوئی ہے۔

میزبان کی جانب سے جب یہ پوچھا گیا کہ کیا ان کی پہلی اہلیہ اور بچوں نے ان کی دوسری شادی پر ناراضگی کا اظہار نہیں کیا تو وہ اس بات کو گول کرگئے اور ان کا کہنا تھا یہ سب چلتا ہی رہتا ہے میرے ذہن میں بچپن سے ہی یہ کیڑا تھا کہ میں دو شادیاں کروں گا اس لئے میں نے دو شادیاں کر کے ہی چھوڑیں۔

ان کا کہنا تھا کہ دوسری شادی کا تعلق پیسے یا کسی اور چیز سے نہیں بلکہ اس کا تعلق دل کی مضبوطی سے ہوتا ہے ۔

اپنے سیاسی مخالفین کے بارے میں ذکر کرتے ہوئے ان کا کہنا تھا کہ حنیف عباسی کو انہوں نے انگلی پکڑ کر سیاست سکھائی لیکن وہ اب ان کا ناخلف شاگرد ہو گیا ھے اس کے علاوہ شیخ رشید کے ساتھ اپنی مخالفت کے بارے میں کہنا تھا کہ شیخ رشید کے ساتھ جو رہتا ہے اس کی زیادہ عزت وغیرہ نہیں ہوتی، اور وہ اپنی انا اور خودداری پر کوئی سمجھوتہ نہیں کر سکتے ۔

حریم شاہ سے متعلق پوچھے گئے سوال کا جواب دیتے ہوئے ان کا کہنا تھا کہ وہ تحریک انصاف کے پی کی رکن ہیں اور ان کی ملاقات ایک دوست کے دفتر میں ہوئی تھی، جب حریم شاہ نے غیرمہذب اندار میں ویڈیو بنانے کی کوشش کی تو وہ اٹھ کھڑے ہوئے اور ان کا خیال تھا کہ وہ اب اس ویڈیو کو نشر نہیں کریں گی ، لیکن انہوں نے پھر بھی کر دی ، خیر ایسا سیاست میں ہوتا رہتا ہے


Featured Content⭐


24 گھنٹوں کے دوران 🔥


From Our Blogs in last 24 hours 🔥


>