مہنگا آٹا بیچنے والوں کے خلاف حکومت نے ہیلپ لائن جاری کردی

حکومت کو مہنگائی کی چکی میں پسنے والی عوام کا خیال آگیا۔ذخیرہ اندوزوں اور منافع خوروں کے خلاف سخت ایکشن لینے کا فیصلہ کرلیا۔آٹے کے بحران پر ہیلپ لائن قائم کردی

آٹا مہنگا بیچنے والوں کے خلاف ہیلپ لائن پر شکایت درج کروائی جاسکتی ہے۔20 کلو کا تھیلا 805 روپے سے زائد کا فروخت کرنے پر کارروائی ہوگی۔وزیر اعظم عمران خان کی معاون خصوصی برائے اطلاعات و نشریات فردوس عاشق اعوان نے پریس کانفرنس کرتے ہوئے کہا کہ میڈیا پر آٹا سپلائی سے متعلق منفی پروپیگنڈا چل رہا ہے۔

یہ خبر بھی پڑھیں : آٹا بحران کے پیچھے کونسا وزیر ہے؟ چیئرمین فلور ملز ایسوسی ایشن نے نام بتادیا

انہوں نے کہا سندھ حکومت نے بروقت گندم کی خریداری نہیں کی،سندھ حکومت کی کوتاہی کے باعث ان کے ذخیرے میں کمی پیدا ہوئی۔سندھ کو 4 لاکھ ٹن گندم فراہم کرنے کا فیصلہ کیا گیا تھا،جو اس اسٹاک سے ایک لاکھ ٹن گندم اٹھا چکا ہے، البتہ سندھ حکومت گندم کو آٹا ملز تک پہنچانے میں ناکام رہی ہے

فردوس عاشق اعوان نے کہا کہ پنجاب بھر میں جہاں مہنگا آٹا بک رہا ہے وہاں حکومت نے کریک ڈاؤن کیا ہے، حکومت نے 6 اضلاع میں ذمے داروں کو معطل اور برطرف کیا ہے

یہ بھی پڑھیں :آٹے کی کم دستیابی پر اسسٹنٹ کمشنر جڑانوالہ کو عہدے سے فارغ کردیا گیا

فردوس عاشق اعوان کا کہنا تھا کہ یوٹیلیٹی اسٹورز پر بھی اگر سستی اشیاءموجود نہیں تو حکومت کو آگاہ کیا جائے۔سیاسی حریفوں کو جتاتے ہوئے کہا واویلہ کیا جا رہا ہے کہ حکومت اپنا وقت پورا نہیں کرے گی، دیوانے کا خواب دیکھنے والے سن لیں حکومت اتحادیوں کے ساتھ 5 سال پورے کرے گی۔اس وقت عوامی خوش حالی کے لیے اتحادی اور حکومت ایک پیج پر ہیں، ایم کیو ایم سمیت تمام اتحادیوں سے بات جاری ہے اور اس حوالے سے جلد عوام کو خوش خبری دیں گے۔

فردوس عاشق اعوان نے کہا کہ کراچی کے لیے 162 ارب روپے کے معاشی پیکیج پر عمل درآمد شروع ہو چکا، پُرامن کراچی ملک کے معاشی اشاریوں کو مثبت بنانے میں اہم کردار ادا کرے گا


  • 24 گھنٹوں کے دوران 🔥

    View More

    From Our Blogs in last 24 hours 🔥

    View More

    This website uses cookies to improve your experience. We'll assume you're ok with this, but you can opt-out if you wish. Accept

    >