ڈیوس فورم کے منتظمین کے پر زور اصرار پر عمران خان کو دعوت دی گئی: معید پیرزادہ

ڈیوس فورم کے منتظمین کے پر زور اصرار پر عمران خان کو دعوت دی گئی: معید پیرزادہ

معروف صحافی اور تجزیہ نگار معید پیرزادہ نے حال ہی میں ایک ویڈیو میں دعویٰ کیا ہے کہ وزیر اعظم عمران خان کو ڈیوس فورم میں شرکت کے لئے بار بار منتظمین کی طرف سے اصرار کیا گیا

ڈاکٹر معید پیرزادہ نے دعوی کیا کہ انہوں نے چار پانچ دن وہاں گزارے اس دوران انکی منتظمین سے تفصیلی بات چیت ہوئی

انکا کہنا تھا کہ منتظمین نے انہیں آگاہ کیا کہ امریکی صدر ٹرمپ کی ٹیم پچھلے سال سے اس بات کا اصرار کر رہی ہے کہ وزیر اعظم عمران خان کو ڈیوس فورم میں شرکت کے لئے بلایا جائے

انکا کہنا تھا کہ انتظامیہ ایک عرصے سے وزیر خارجہ شاہ محمود قریشی اور نعیم الحق کے ساتھ رابطے میں تھے

انہوں نے مزید انکشاف ہوا کہ ٹرمپ کی ٹیم نے فورم کے منتظمین سے کہا تھا کہ عمران خان اور ٹرمپ کی کوئی اچانک ملاقات کا بندوبست کیا جائے تاکہ لوگوں کو یہ شک نا گزرے کہ ٹرمپ نے خود عمران خان سے ملنے کی درخوست کی ہے

ڈاکٹر معید پیرزادہ نے مزید بتایا کہ ڈیوس فورم کے منتظمین کی طرف سے کیا جانے والا اصرار اصل میں امریکی صدر کی ٹیم کی طرف سے کیا جا رہا تھا

انکا کہنا تھا کہ عمران خان کی اچھا بولنے کی طاقت اور کرشماتی شخصیت نے بھی لوگوں کو انکی طرف کھنیچنا تھا جسکی وجہ سے منتظمین کی کوشش تھی کہ عمران خان ضرور اس فورم میں شرکت کریں

تاہم حکومتی سطح پر ابھی تک اس دعوی کی تائید یا تردید نہیں کی گئی

  • اور اگر نواز شریف ہوتا تو موذی اور جندال کا اصرار ہوتا کہ نواز شریف کو ضرور بلایا جائے تاکہ پاکستان کے خلاف کوئی سازش تیار کی جائے اور اپنا بزنس بڑھایا جائے۔

  • اس افلاطون سے کوئی یہ پوچھے کہ یہ مسائل جو عمران خان کی حکومت کو درپیش ہیں کیا یہ موجودہ حکومت کے پیدا کردہ ہیں ہر ٹی وی کے افلاطون کا اپنا نقظہ نظر ھے عمران خان ان مسائل کو ختم کر دے گا بس اگر ٹی وی کے افلاطون اپنے منہ بند کر دیں

  • سرمایہ داروں، صنعت کاروں، جاگیرداروں، وڈیروں، نام نہاد پیروں کا 200-250 خاندانوں کا "حرامی ٹولہ” جو مختلف سیاسی جماعتوں کے ذریعے اسمبلیوں اور دیگر اداروں پر قابض ہے اور سب سے بڑھ کر اسٹیبلشمنٹ عوام کی فلاح و بہبود اور ملکی ترقی کی راہ میں سب سے بڑی رکاوٹ ہیں-

    انھیں ہر صورت اپنے مفادات عزیز ہیں- یہ ملک ان کرپٹ افراد کے لیئے ایک چراہگاہ ہے- چونکہ یہ لوگ عوام میں سے نہیں اسلیئے انھیں عوام کی ترقی و خوشحالی سے کوئی غرض نہیں- ملک و قوم کا مفاد جائے بھاڑ میں-

    اللہ تعالی وطن عزیز کو مفاد پرستوں کے اس کرپٹ ٹولے سے نجات دے کر ترقی و خوشحالی کی راہ پر گامزن کرے- اور اللہ ہمیں دین و ملت کی سربلندی اور فائدے کی خاطر ان بدعنوان عناصر کے خلاف پوری مستی کے ساتھ با آواز بلند کھل کر بولنے کی توفیق عطاء فرمائے-
    ﷺ ، آمین

  • عمران خان کو چاہئیے کہ تمام اداروں میں جدید تقاضوں سے ہم آہنگ بین الاقوامی معیار کی اصلاحات لائے- خاص طور پر بین الاقوامی معیار کا تخلیقی نظام تعلیم، اسلامی تعلیمات پر تکیہ کیا ہوا عدالتی نظام، اعلی درجے کی پولیس اصلاحات، جدید صنعت کاری جہاں کمپنی کے منافع میں مزدور کا بھی حصہ ہو، لینڈ ریفارمز جو قابض جاگیرداروں سے غریب کسانوں کو زمین کے مالکانہ حقوق دیتے ہوئے زراعت جو کہ ملکی معیشیت کی ریڑھ کی ہڈی ہے کو مضبوط بنائے-

    اپنی حدود کو تجاوز کرتی ہوئی کرپٹ بیوروکریسی اور خصوصی طور پر سیاسی و کاروباری معاملات کو چلاتی ہوئی اسٹیبلشمنٹ کی صحیح معنوں میں حد بندی کرے-

    مختصر الفاظ میں سارے نظام کی "تیزابی تطہیر” ہماری بقاء و ترقی کے لیئے از حد ضروری ہے-

    اگر "عمران خان” ملکی و قومی مفاد میں یہ سب کرنے میں کامیاب ہو جاتا ہے تو وہ "پاکستان کا اصل ہیرو” ہوگا-

    یاد رکھئے:
    عمران خان سے بہتر لیڈر اور اس سے اچھا وقت پھر شاید کبھی نہ آئے!!!!!👍🏻👍🏻👍🏻 ☺☺☺

    دو نمبر جنرلز و کرپٹ سیاسی و غیر سیاسی مافیا کے علاوہ:
    پاک آرمی زندہ باد
    پاکستان پائندہ باد


  • 24 گھنٹوں کے دوران 🔥

    View More

    From Our Blogs in last 24 hours 🔥

    View More

    This website uses cookies to improve your experience. We'll assume you're ok with this, but you can opt-out if you wish. Accept

    >