بغاوت کچلنے کے باوجود طوفان ابھی تھما نہیں، رؤف کلاسرا

کیا وزیراعظم عمران خان اضطراب کا شکار ہیں؟ پنجاب, کے پی کے میں "بغاوت” کچلنے کے باوجود سب کچھ ٹھیک نہیں اس بارے میں رؤف کلاسرہ کی کیاخبرہے؟ نواز شریف اور اسٹیبلشمنٹ کے درمیان کس قسم کے پیغامات کا تبادلہ ہوا ہے؟

رؤف کلاسرا نے انکشاف کرتے ہوئے کہا کہ وزیراعظم عمران خان نے پنڈی میں اہم شخصیت سے ملاقات پر عاطف خان اور شہرام ترکئی کو تو فارغ کردیا لیکن ایک اہم وفاقی وزیر کو فارغ نہ کرپائے جس کی وجہ شاید یہ ہے کہ وہ تحریک انصاف کی اے ٹی ایم ہے اور پارٹی کیلئے فنڈنگ کرتی ہے اور مستقبل میں اس شخصیت کی پھر ضرورت پڑسکتی ہے۔

رؤف کلاسرا کا کہنا تھا کہ حکومت میں کچھ ٹھیک نہیں ہے ، فواد چوہدری نے حامد میر کے شو میں کھل کر کہا ہے کہ اس وقت ٹوٹل فیلئیر ہے۔ فوادچوہدری واحد وزیر ہیں جو حکومت کی ناکامیوں اور پالیسیوں پر کھل کر تنقید کرتے ہیں۔ فواد چوہدری کو عثمان بزدار اور محمود خان پر بہت تحفظات ہیں۔

رؤف کلاسرا نےمزید کہا کہ جب وزیراعظم نے کہا کہ وہ عثمان بزدار کو نہیں ہٹائیں گے تو چوہدری برادران بھی خاموش ہوگئے ہیں ، ایسا لگ رہا ہے کہ ہر طرف خاموشی ہے اور طوفان تھم گیا ہے لیکن میری انفارمیشن کے مطابق طوفان ابھی تھما نہیں ہے۔

شہبازشریف سے متعلق رؤف کلاسرا نے کہا کہ شہبازشریف نے جو لینا تھا وہ لے لیا، اب وہ عمران خان کے خلاف تحریک عدم اعتماد بھی نہیں لائیں گے بلکہ انکی دو ڈیمانڈ ہیں ، ایک حمزہ شہباز کی رہائی اور دوسرا مریم نواز کو لندن بھجوانا۔

رؤف کلاسرا نے مزید کہا کہ عمران خان پہ بڑا شدید دباؤ ہے کہ وہ عثمان بزدار سے متعلق کوئی فیصلہ کریں کیونکہ پنجاب بہت بڑا صوبہ ہے جسے مینیج کرنا بہت مشکل ہے۔

رؤف کلاسرا کا مزید کہنا تھا کہ اسٹیبلشمنٹ عمران خان کو ہٹانا نہیں چاہتی کیونکہ پیپلزپارٹی اور ن لیگ کسی ان ہاؤس چینج یا قومی حکومت کے حق میں نہیں ہیں اور وہ چاہتی ہیں کہ لوگوں کا ایک بار عمران خان سے جو رومانس ہے وہ ختم ہو۔ دوسری جانب اسٹیبشلمنسٹ یہ سمجھتی ہے کہ عمران خان عالمی سطح پر ایک قد آوار شخصیت ہیں جس کی بات پوری دنیا میں سنی جاتی ہے اور وہ بغیر پرچی کے تقریر کرسکتے ہیں۔ اس وقت کشمیر بہت بڑا مسئلہ ہے جس پر عمران خان ہی کھل کر بات کرسکتے ہیں اور انکا ایک ٹویٹ بہت امپیکٹ ڈالتا ہے ۔

  • یہ بندہ بھی نوکری جانے کے بعد ذہنی مریض بن چکا ھے جس کا پی ٹی آئی کی حکومت ختم ہونے تک کوئی علاج ممکن نہیں ھے اس بندے کے لئے بس دعا ہی کی جاسکتی ھے


  • 24 گھنٹوں کے دوران 🔥

    View More

    From Our Blogs in last 24 hours 🔥

    View More

    This website uses cookies to improve your experience. We'll assume you're ok with this, but you can opt-out if you wish. Accept

    >