خواجہ آصف نے انصار عباسی کے دعوے کو جھوٹ پر مبنی قرار دیا

عمران خان حکومت گرانے کیلئے ایک وفاقی وزیر کے ن لیگ اور خواجہ آصف سے رابطے ۔۔ خواجہ آصف نے انصار عباسی کے دعوے کو جھوٹ پر مبنی قرار دیدیا

انصا رعباسی نے ایک سینئر وزیر وفاقی کے حوالے سے دعویٰ کیا کہ ایک سینئر وزیر نے وزیراعظم عمران خان کے خلاف تحریک عدم اعتماد لانے کیلئے ن لیگ سے رابطہ کیا ہے اور پیغام خواجہ آصف کو پہنچا دیا گیا ہے۔ خواجہ آصف نے انصار عباسی کے اس دعوے کی تردید کردی اور کہا کہ میرے سےتو کسی نےرابطہ نہیں کیا۔

خواجہ آصف نے مزید کہا کہ انصار عباسی صاحب ماشاءاللہ محترم اور مستند صحافی ھیں، صحافتی آداب کو ملحوظ خاطر رکھتے ھوئے اگر مجھ سے تصدیق کر لیتے تو مجھے تردید کی گستاخی نہ کرنی پڑتی۔

واضح رہے کہ کچھ روز قبل انصار عباسی نے دعویٰ کیا تھاکہ پاکستان تحریک انصاف سے تعلق رکھنے والے ایک وفاقی وزیر نے مبینہ طور پر نون لیگ کی سینئر قیادت کو وزیراعظم عمران خان کیخلاف قومی اسمبلی میں عدم اعتماد کی تحریک لانے کی پیشکش کی ہے۔

انصار عباسی نے مزید دعویٰ کرتے ہوئے کہا کہ یہ پیغام نواز شریف، شہباز شریف اور خواجہ آصف تک پہنچا دیا گیا ہے۔ انصار عباسی کے مطابق وفاقی وزیر نے حال ہی میں نون لیگ کی سینئر رہنما کی فیملی کے ایک رکن سے اس معاملے پر بات کی ہے کہ اگر عدم اعتماد کی تحریک لائی گئی تو پی ٹی آئی کے کئی ارکان قومی اسمبلی بھی اس کی حمایت کریں گے، پی ٹی آئی کے اتحادی جماعتوں کے ساتھ تعلقات پہلے ہی مشکلات کا شکار ہیں۔

  • انصار عباسی لگا ہے نوں لیگ کو وخت ڈالنے .جو کام کرنے کی ان کی اوقات نہیں اس کو کرنے کی مجبوری میں مبتلا کرنے لگا ہے .

  • دنیا کے جن ممالک میں حرام خور میڈیا اور حرام خور صحافیوں کا احتساب کیا جاتا ھے وہ تمام ممالک اور ان کی عوام سکون اور انصاف کے ساتھ ترقی کے ساتھ زندگیاں گزار رہے ہیں اور جن ممالک میں حرام خور میڈیا اور حرام خور صحافیوں کا حرامی بلیک میلنگ کا ٹولہ موجود وہ ملک اور عوام اور ادارے کرپشن سے بھرے پڑے ہیں کیونکہ ایماندار میڈیا کی وجہ سے عوام اور ملک کی ترقی ہوتی ھے۔ لیکن بدقسمتی سے پاکستان میں زیادہ تر حرامی بلیک میلرز لفافہ خور صحافی میڈیا میں موجود ہیںِ

  • جن ممالک میں میڈیا کے اور میڈیا میں موجود حرام خور صحافیوں کو جھوٹ اور جھوٹی خبروں پر سزائیں دی جاتیں ہیں وہ ممالک آج خوشحال زندگی گزار رہے ہیں

  • میڈیا کے ان منافقین کو جو جھوٹی خبریں پیھلاتے ہیں اور جو لوگ آپنی خواہشات کے مطابق جھوٹ بولتے ہیں اس طرح کے میڈیا کے صحافیوں اور ان کے چینلز کو سخت سے سخت سزائیں دی جائیں  کیونکہ دنیا بھر میں جھوٹ کی صحافت کرنے پر  بہت سخت سخت سزائیں دی جاتی ہیں


  • Featured Content⭐


    24 گھنٹوں کے دوران 🔥


    From Our Blogs in last 24 hours 🔥


    >