ہمارے کچھ اینکر پیسے لے کر مخصوص ایجنڈا کے تحت پروگرام کرتے ہیں،ابصارعالم

ہمارے کچھ اینکر پیسے لے کر مخصوص ایجنڈا کے تحت پروگرام کرتے ہیں۔ ٹی وی مالکان اینکرز کا استعمال کرتے ہیں،انکے لئے ایکشن نہیں لیتے،ابصار عالم

سینیئر صحافی اور سابق چیئرمین پیمرا ابصار عالم کا کہنا ہے کہ میڈیا ایک انڈسٹری ہے، کوڈ آف کنڈکٹ ہر انڈسٹری کا ہوتا ہے،میڈیا انڈسٹری پر عمل کرے گی تو میڈیا مضبوط ہوگا اگر قانون کی خلاف ورزی کرے گا میڈیا یا کوئی بھی تو اخلاقی حیثیت ختم ہوجائے گی۔

ابصارعالم کا مزید کہنا تھا کہ اگر آپ کسی کی طرف انگلی اٹھارہے ہو کہ تم کرپٹ ہو تم قانون کی خلاف ورزی کررہے ہو تو سب سے پہلے مجھے قانون نہیں توڑنا چاہئے، میڈیا کوڈ آف کنڈکٹ خود فولو کرے۔

ابصارعالم نے دعویٰ کیا کہ ہمارے کچھ اینکر پیسے لے کر مخصوص ایجنڈا کے تحت پروگرام کرتے ہیں ۔ میں آپ سے سوال پوچھتا ہوں کہ کیا کچھ اینکرز پیسے لیکر پروگرام نہیں کرتے؟ کیا پیسے لیکر پوری سیریز نہیں چلاتے لوگوں کے خلاف اور پھر اچانک چپ کرجاتے ہیں اس ایشو پر بات کرنا؟

ابصار عالم نے بتایا کہ میں ایک چینل کو تحریر میں کہا کہ یہ کوڈآف کنڈکٹ کا جھگڑا خود حل کریں۔ تو ٹی وی مالکان نے کہا کہ ہم چاہتے ہیں کہ اینکرز آپ سے لڑیں، ہم کیوں اینکرز سے لڑیں، چینل مالکان اپنے اینکرز کے خلاف ایکشن لینا نہیں چاہتے ۔

انہیں استعمال کرتے ہیں ۔ انہوں نے میرے خلاف استعمال کرنا ہے آپ کے خلاف استعمال کرنا ہے، اینکرز کسی اور کے ذریعے بھی استعمال ہورہے ہوتے ہیں، پیسے لے کر پوری سیزیز چلاتے پیں لوگوں کے خلاف، پھر اچانک اس ایشو پر بات کرنے پر چپ ہوجاتے ہیں۔

  • عوام کو یہ سب معلوم ھے حرام خور صحافیوں کا ٹولہ اور حرام خور میڈیا ہی پاکستان کا نمبر 1 دشمن ھے آج اس نے بھی سچ بول دیا ۔


  • Featured Content⭐


    24 گھنٹوں کے دوران 🔥


    From Our Blogs in last 24 hours 🔥


    >