مولانا فضل الرحمان کا ذکر کرتے ہوئے اینکر عمران خان نے کانوں کو ہاتھ کیوں لگالئے؟

مولانا فضل الرحمان کا ذکر کرتے ہوئے اینکر عمران خان نے کانوں کو ہاتھ کیوں لگالئے؟اینکر عمران خان نے مولانا فضل الرحمان کے ذکر سے پہلے وضو کیوں کیا؟ سنئے اینکر عمران خان سے

نجی ٹی وی چینل سے گفتگو کرتے ہوئے اینکر عمران خان نے کہا کہ مولانا فضل الرحمان مدرسے کے بچوں کو استعمال کر رہے ہیں، اگر استاد کہے کہ آپ نے ہمارے ساتھ جانا ہے تو پھر طلباء انکار نہیں کرسکتے۔انکی عزت کرتے ہیں، وہ جہاں بھی کہیں لےجائیں گے، انہیں مرنے کیلئےبھی کہیں گے تو وہ مرنے کیلئے تیار ہوجائیں گے۔

اینکر عمران خان کے مطابق ٹیکنیکلی بچے تو ٹھیک کررہے ہیں جہاں انکا استاد کہہ رہا ہے وہ جارہے ہیں، معاملہ یہ ہے کہ مولانا فضل الرحمان انہیں کہاں لیکر جارہے ہیں اور کس مقصد کیلئے استعمال کررہے ہیں؟جب چاہتے ہیں انہیں نکالتے ہیں، جلسہ کرتے ہیں، جلوس کرتے ہیں، اپنے مقصد کیلئے استعمال کرتے ہیں، ختم نبوت کے نام پر جلسہ کریں گے اور اس میں صرف سیاست ہوگی، اس طرح وہ دین کو سیاست کیلئے استعمال کررہے ہیں۔

اینکر عمران خان کا کہنا تھا کہ مذہبی جماعت کا مقصد یہ ہوتا ہے کہ یہ سیاست کریں گے اور سیاست کے ذریعے دین کو فائدہ پہنچائیں گے لیکن یہاں الٹا کام ہورہا ہے، ہو یہ رہا ہے کہ یہ سیاست کریں گے اور اپنے دین کا فائدہ اٹھاتے ہوئے سیاست کریں گے۔ یہ الٹی گنگا بہہ رہی ہے پاکستان میں۔ مولانا اپنا ذاتی فائدہ اٹھاتے ہیں، دین کو استعمال کرکے سیاست کرتے ہیں، یہ سلسلہ نیا نہیں ہے۔

مولانا فضل الرحمان کے کرپشن کیسز کا تذکرہ کرتے ہوئے اینکر عمران خان نے کانوں کو ہاتھ لگالئے اور کہا کہ مولانا فضل الرحمان کے کرپشن کیسز دیکھیں، اللہ تعالیٰ سے رحم مانگنا چاہئے۔ مولانا فضل الرحمان نے 200 روپے کنال سے اپنے نام سے 1200 کنال زمین الاٹ کروائی جو فوج کے شہداء کے نام سے تھی وہ مولانا نے مشرف دور میں اپنے اور ساتھیوں کے نام سے کروائی، آپ کسی عالم دین سے یہ توقع نہیں کرسکتے۔

اینکر عمران کا مزید کہنا تھا کہ انصار عباسی نے انہیں چیلنج کیا تھا یہ انکے چیلنج کاکبھی جواب نہیں دے پائے بلکہ یہ کہتے ہیں کہ پہلے آپ وضو کرکے آئیں پھر مولانا فضل الرحمان کا نام لیں، میں وضو کرکے آیا ہوں اور وضو کرکے بیٹھا ہوں۔جے یو آئی ف کے مطابق مولانا فضل الرحمان کا نام بغیر وضو کے نہیں لے سکتے۔ہم باوضو ہوکر کہہ رہے ہیں کہ وہ عالم دین ہیں اور عالم دین رہیں، جو وہ دین کو سیاست کیلئے استعمال کررہے ہیں وہ نہ کریں ، ہاں سیاست کے ذریعے دین کا فائدہ کریں۔


  • Featured Content⭐


    24 گھنٹوں کے دوران 🔥


    From Our Blogs in last 24 hours 🔥


    >