فی الحال اسمبلیوں سے استعفے نہیں دے رہے، شاہد خاقان عباسی

پی ڈی ایم کے فیصلوں کے سب پابند ہوں گے، شاہد خاقان عباسی، جانیئے استعفوں سے متعلق ان کی کیا رائے ہے

سابق وزیراعظم اور مسلم لیگ ن کے سینئر نائب صدر شاہد خاقان عباسی نے نجی ٹی وی چینل کے پروگرام میں گفتگو کرتے ہوئے کہا کہ پاکستان ڈیمو کریٹک موومنٹ کے پلیٹ فارم سے جو بھی فیصلے کیے جائیں گے تمام ارکان جماعتیں اس پر عملدرآمد کی پابند ہوگی۔

شاہد خاقان عباسی نے پی ڈی ایم کے استعفوں سے متعلق کہا کہ استعفے ابھی نہیں دیئے جا رہے۔ ان کا فیصلہ مشاورت سے کیا جائے گا۔ انہوں نے کہا کہ استعفوں سمیت تمام آپشن موجود ہیں مگر یہ تمام فیصلے مشاورت سے کیے جاتے ہیں۔

انہوں نے ایک سوال کے جواب میں کہا کہ ڈائیلاگ جیسی کوئی بات نہیں، ڈائیلاگ وہاں ہوتا ہے جہاں کچھ حاصل ہو، ملک میں نئے انتخابات کی ضرورت ہے اس کے بغیر ملک آگے نہیں بڑھ سکتا۔

میزبان نے ان سے لندن کے دورے کے دوران نواز شریف سے ملاقات کا پوچھا جس کے جواب میں انہوں نے کہا کہ ان کی نواز شریف سے ملاقات نہیں ہوئی، بات ہوئی تھی مگر اس کے دوران بھی صرف ان کی والدہ کے انتقال پر تعزیت کی اور کچھ نہیں۔

شاہد خاقان عباسی نے نواز شریف کی وطن واپسی سے متعلق کہا کہ واپسی کا معاملہ صحت سے مشروط ہے، باقی سیاسی معاملات میں نواز شریف جو موقف رکھتے ہیں اس کا اظہار ہر پی ڈی ایم میٹنگ میں کیا جاتا ہے۔

  • عباسی اپنے آبائی حلقہ سے الیکشن ہار گیا تو نونی لیگ نے اسے اپنے لاہور کے حلقے سے جتایا کیا حال ہو گیا ان کا کہ ان کی اپنی شناخت ختم ہو گئی اب کبھی کہتے ہیں استعفی دینا کبھی کہتے لینا ہے اب کہتے نہیں ہم نے نہیں دینا کیون کہ اندر سے اپنی حالت پتا چل چکی ہے کہ استعفی دینے کی کوشش کی تو سیاسی طور پر ننگیں ہو جائیں گیں اپنی طاقت کھو دیں گیں کیوں کہ ساروں نے استعفی دینا نہیں اور ان کا پتا چل جانا ہے کہ کہاں کھڑے ہیں جو اوپر اوپر سے عزت بنی ہے وہ بھی نہیں رہنی


  • Featured Content⭐


    24 گھنٹوں کے دوران 🔥


    From Our Blogs in last 24 hours 🔥


    >