برطانوی عدالت کے جج کے ریمارکس شریف خاندان کے لیے کلین چٹ ہیں، حسین نواز

سابق وزیراعظم نواز شریف کے صاحبزادے حسین نواز کا براڈ شیٹ کیس کے معاملے پر بات کرتے ہوئے اپنے ایک بیان میں کہنا تھا کہ لندن کی عدالت نے نواز شریف اور فیملی کو کلین چٹ دے دی ہے، حقائق جاننے کے لیے لندن کی ثالثی عدالت کے جج سر اینتھونی ایونز کا فیصلہ پڑھنا ضروری ہے۔

سابق وزیراعظم کے صاحبزادے حسین نواز کا کہنا تھا کہ لندن کی ثالثی عدالت کے جج سر انتھونی ایونز نے براڈ شیٹ کیس میں اپنے فیصلے میں لکھا ہے کہ تحقیقات کے دوران نواز شریف اور ان کے خاندان کے خلاف کوئی چیز سامنے نہیں آ سکی، جج انتھونی ایونز کے یہ ریمارکس شریف خاندان کےلئے کلین چٹ ہیں۔

ان کا کہنا تھا کہ نواز شریف کے اثاثوں کا پتہ لگانے کے لئے براڈشیٹ نے سراغ رساں ایجنسی میٹرکس کی خدمات لی تھیں، ہمارے مخالفین نے جب بھی کسی غیر جانبدار فرم سے رجوع کیا ان کو ہمیشہ منہ کی ہی کھانی پڑی، نیب کے بے بنیاد دعووں کی وجہ سے براڈشیٹ نے اپنا 20 فیصد حصہ وصول کر لیا ہے جس کی سزا پاکستان کے ٹیکس گزاروں کو مل رہی ہے۔

حسین نواز کا اپنے بیان میں کہنا تھا کہ اسلام آباد میں جھوٹ بولنے کا کارخانہ لگا ہوا ہے جہاں سے ہمارے خلاف اب تک جھوٹے پروپیگنڈے ہی کیے گئے ہیں، وفاقی حکومت کے ایک ارب ڈالر منتقل کرنے کے دعوے میں کوئی صداقت نہیں ہے، میں جلسے جلوسوں میں بڑے دعوے کرنے والوں کو چیلنج کرتا ہوں کہ ہمارے خلاف کوئی ثبوت پیش کریں۔

فارن فنڈنگ کیس پر بات کرتے ہوئے حسین نواز کا اپنے بیان میں کہنا تھا کہ الیکشن کمیشن کا فارن فنڈنگ کیس میں وزیراعظم عمران خان کے خلاف ایکشن نہ لینا سمجھ سے بالاتر ہے، انہوں نے کہا وفاقی حکومت کی سر توڑ کوششوں کے بعد بھی براڈ شیٹ کو کچھ نہیں ملا تھا۔

  • براڈشیٹ کا سکینڈل سامنے آنے پر مریم صفدر نے کہا تھا کہ آج نوازشریف "سرخرو” ہو گیا
    اب سوال یہ ہے کہ اگر نوازشریف سرخرو ہو گیا تھا تو شیخ عظمت سعید کے انکوائری کمیشن کے ہیڈ بننے پر ٹانگیں کیوں کانپ رہی ہیں ؟ ماتھے پر پسینے کیوں ہیں ؟ اگر چوری نہیں کی تو تلاشی دینے سے گھبرا کیوں رہے ہو ؟
    اگر پانامہ کیس والے ججوں سے اتنا ہی مسلہ ہے تو پھر ایک درخواست موجودہ چیف جسٹس کے خلاف بھی دے دیں، انہوں نے بھی نوازشریف کو نااہل قرار دیا تھا۔۔۔۔!!

  • Yeh nasal bhi kya nasal hai – mar kiun nahi jati ***Tareekh nay kabhi aisa beghairat aur kamina gharana kabhi nahi dekha jo Pakistan ke sabiq wazeer e azam, jinki nasal choron ki nasal hai, aur jinka pesha paisya keliye kuch bhi karna , aur inka naara : paisay keliye girnay may koi had nahi honi chahiye, ye woh khandaan hai jo paisya keliye Baap, Maan, Bewi , Beti, Bahu, Beta sub kuch bechta hai, aur is jurm may is khandaan ka her Mard aur Aurat shamil hai.


  • Featured Content⭐


    24 گھنٹوں کے دوران 🔥


    From Our Blogs in last 24 hours 🔥


    >