فیصل واڈا کی خالی کردہ سیٹ پر پیپلزپارٹی نے بھی نظریں گاڑلیں

فیصل واڈا کی خالی کردہ سیٹ پر پیپلزپارٹی نے بھی نظریں گاڑلیں۔۔ پیپلزپارٹی کی اتحادی ن لیگ کے مفتاح اسماعیل بھی میدان میں

پاکستان پیپلزپارٹی نے تحریک انصاف کے رہنما فیصل واوڈا کے استعفے کے بعد خالی ہونے والی قومی اسمبلی کی نشست این اے 249 سے ضمنی انتخاب میں حصہ لینے کے خواہش مند امیدواروں سے درخواستیں طلب کرلی ہیں۔

خبررساں ادارے کی رپورٹ کے مطابق تحریک انصاف کے رہنما فیصل واوڈا نے کراچی سے قومی اسمبلی کی نشست 249 سے استعفیٰ دیدیا ہے جس کے بعد اس حلقے میں ضمنی الیکشن منعقد کروائے جائیں گے، ضمنی انتخابات میں امیدوار اتارنے کیلئے پیپلزپارٹی نے تیاریاں شروع کردی ہیں۔

ترجمان بلاول ہاؤس کی جانب سے جاری کردہ بیان میں کہا گیا ہے کہ پیپلزپارٹی نے اس حلقے سے الیکشن لڑنے کے خواہش مند افراد کو پارٹی ٹکٹ جاری کرنے کیلئے درخواستیں طلب کرلی ہیں، ترجمان بلاول ہاؤس کے مطابق ٹکٹ کے خواہش مند امیدوار ایک ہفتے کے اندر درخواستیں بلاول ہاؤس یا پارٹی کے اسلام آباد آفس ارسال کریں۔

الیکشن 2018 میں اس سیٹ پر فیصل واڈا اور شہباز شریف آمنے سامنے تھے جس میں فیصل واڈا نے شہبازشریف کو معمولی مارجن سے شکست دیکر الیکشن جیت لیا تھا جبکہ پیپلزپارٹی کی جانب سے قادرخان مندوخیل نے الیکشن لڑا تھا جنہوں نے فیصل واڈا کی نااہلی کی پٹیشن دائر کررکھی ہے۔

الیکشن 2018 میں اس سیٹ پر فیصل واڈا نے 35344 جبکہ شہبازشریف نے 34626 ووٹ لئے تھے۔ تیسرے نمبر پر تحریک لبیک کے مفتی عابد مبارک رہے جنہوں نے 23981ووٹ لئے جبکہ ایم کیوایم 10534 ووٹ لیکر تیسرے اور پیپلزپارٹی 7236 ووٹ لیکر پانچویں نمبر پر رہی۔ اگر پی ڈی ایم جماعتوں کے ووٹ بنک کو اکٹھا کیا جائے تو یہ 52 ہزار سے زائد بنتا ہے یعنی مارجن 17 ہزار سے زائد۔۔

یادرہے کہ مولانا فضل الرحمان کی جماعت نے 2018 میں ایم ایم اے کے ٹکٹ سے الیکشن لڑا تھا اور ایم ایم اے کے متفقہ امیدوار نے 10307 ووٹ لئے تھے

واضح رہے کہ وفاقی وزیر برائے آبی وسائل فیصل واوڈا کے خلاف اسلام آباد ہائی کورٹ میں گزشتہ دنوں نااہلی کیس کی سماعت ہوئی جس میں ان کے وکیل نے عدالت کے سامنے فیصل واوڈا کا قومی اسمبلی سے استعفیٰ پیش کیا۔

دوسری جانب قومی اسمبلی کے اسپیکر کو اب تک ان کا استعفیٰ موصول نہیں ہوا، اسپیکر قومی اسمبلی تک استعفیٰ پہنچنے اور اس کے منظور ہونے تک فیصل واوڈا قومی اسمبلی کے رکن تصور کیے جائیں گے۔

یاد رہے کہ اس حلقے میں ضمنی انتخاب کیلئے مسلم لیگ ن کے قائد میاں نواز شریف نے پارٹی رہنما مفتاح اسماعیل کو ٹکٹ جاری کرنے کا فیصلہ کیا ہے۔

  • Abhi tau PDM mein muk muka tah aapas mein nahin larein geee
    aur ab dunoon apna apna candidate nominate ker rahey hein

    Agar imran na hau tau yeh dunoon aik doosrey ko phir sey daku daku ka naara lagayenge


  • Featured Content⭐


    24 گھنٹوں کے دوران 🔥


    From Our Blogs in last 24 hours 🔥


    >