این اے 249: چیئرمین پی ایس پی مصطفیٰ کمال نے ضمنی انتخابات ملتوی نا کرنے کی درخواست کر دی

این اے 249 سے پی ایس پی کے امیدوار اور چئیرمین پاک سر زمین پارٹی سید مصطفیٰ کمال نے چیف الیکشن کمشنر سے ضمنی انتخابات کو ملتوی نا کرنے کی درخواست کر دی۔

انہوں نے کہا کہ حکومت سندھ اور ایم کیو ایم کی جانب سے ضمنی انتخاب ملتوی کرنے کی درخواستیں زمینی حقائق کے برعکس ہیں۔سندھ کی حکومتی جماعت پیپلزپارٹی اور ایم کیو ایم نے این اے 249 کے ضمنی انتخاب میں شکست کے واضح آثار کے بعد الیکشن کمیشن کو انتخابات ملتوی کرنے کی گمراہ کن درخواست دی ہے۔

چیئرمین پی ایس پی کا کہنا ہے کہ حکومت سندھ کے جاری کردہ اعداد و شمار کے مطابق این اے 249 میں مورخہ 20 اپریل کو کرونا وائرس سے متاثرہ افراد کی تعداد فقط 2 تھی۔ الیکشن کمیشن پاکستان کے ٹیکس ادا کرنے والوں کے خون پسینے کی کمائی این اے 249 کے ضمنی انتخاب میں لگ چکی ہے۔

مصطفیٰ کمال کا کہنا ہے کہ ضمنی انتخاب میں کسی بھی قسم کی تاخیر قومی خزانے پر بوجھ بنے گی۔کرونا ایس او پیز پر عملدرآمد کو یقینی بنا کر انتخابات مقرر کردہ 29 اپریل 2021 پر ہی کرائے جائیں۔

چیئرمین پاک سر زمین پارٹی نے کہا کہ الیکشن کمیشن سندھ کی صوبائی حکومت اور ایم کیو ایم کی درخواست فوری طور پر خارج کرکہ مقررہ تاریخ 29 اپریل کو ہی ضمنی انتخابات یقینی بنائے۔


Featured Content⭐


24 گھنٹوں کے دوران 🔥


From Our Blogs in last 24 hours 🔥


>