دفاعی بجٹ سے متعلق احسن اقبال فکرمند، سوشل میڈیا صارفین کے دلچسپ تبصرے

مسلم لیگ ن کے جنرل سیکرٹری اور سابق وزیر داخلہ احسن اقبال نے دفاعی بجٹ سے متعلق تشویش کا اظہار کرتے ہوئے سماجی رابطوں کی ویب سائٹ ٹوئٹر پر کہا کہ تحریک انصاف نے اپنے 3 سالہ دور اقتدار میں دفاعی بجٹ میں اضافہ نہیں کیا۔ انہوں نے دفاعی بجٹ کے نہ بڑھنے کو ملکی سلامتی کے لیے خطرہ قرار دیا۔

دفاعی بجٹ سے متعلق احسن اقبال فکرمند، سوشل میڈیا صارفین کے دلچسپ تبصرے

احسن اقبال نے کہا کہ تحریک انصاف کے 3 سالہ دور اقتدار سے دفاعی بجٹ منجمد ہے یعنی اس میں اضافہ نہیں کیا گیا جبکہ ہمسایہ ملک نے اسی عرصے کے دوران اپنے دفاعی بجٹ میں 62 فیصد اضافہ کر دیا ہے۔ انہوں نے کہا کہ مسلم لیگ ن نے اپنے گزشتہ دور حکومت کے پہلے 3 سالوں میں دفاعی بجٹ میں 40 فیصد اضافہ کیا تھا۔

رہنما مسلم لیگ ن نے بجٹ 22-2021 میں دفاعی بجٹ میں اضافہ نہ ہونے کو ملکی سلامتی کیلئے خطرہ اور حکمران جماعت کو نااہل قرار دیتے ہوئے کہا کہ یہ عوام کے لیے وبال جان ہیں۔

دوسری جانب گزشتہ روز وفاقی حکومت کی جانب سے پیش کیے جانے والے بجٹ 22-2021 میں حکومت نے 74 ارب روپے سے زائد کا اضافہ کیا ہے اور اس سال ملکی دفاع کے لیے 1373 ارب روپے کا بجٹ رکھا گیا ہے۔ مالی سال 22-2021 کے بجٹ کی دستاویز کے مطابق دفاعی امور اور خدمات کیلئے 1373.275 ارب روپے رکھے گئے ہیں۔

جب کہ گزشتہ مالی سال 22-2021 کے بجٹ میں دفاع کا نظرثانی شدہ میزانیہ 1299.188 ارب روپے رکھا گیا تھا اور آئندہ مالی سال کے بجٹ میں دفاع کیلئے 74.087 ارب روپے کا اضافہ کیا گیا ہے۔

بجٹ دستاویز کے مطابق دفاعی انتظامیہ کیلئے 3.275 ارب روپے مختص کیے گئے ہیں جبکہ دفاعی خدمات کیلئے 1370 ارب روپے رکھے گئے ہیں جس میں سے ملازمین کے اخراجات کیلئے 481.592 ارب روپے، عملی اخراجات کیلئے 327.136 ارب روپے، مادی اثاثہ جات کیلئے 391.499 ارب روپے اور تعمیرات عامہ کیلئے 169.773 ارب روپے رکھے گئے ہیں۔

احسن اقبال کے حقائق کے برعکس اس موازنے پر سوشل میڈیا صارفین نے انہیں تنقید کا نشانہ بنایا اور امنان راجپوت نے کہا کہ "اپنی جگہ پکی کر ریا ایں سوہنیاں؟” یعنی کیا وہ فوج کے دل میں اپنے لیے نرم گوشہ تلاش کر رہے ہیں؟

دفاعی بجٹ سے متعلق احسن اقبال فکرمند، سوشل میڈیا صارفین کے دلچسپ تبصرے

عمر ہاشمی نے کہا کہ آپ دن رات اسی فوج کو گالیاں دیتے ہیں جو3 سال سے مہنگائی کے باوجود پرانی تنخواہ پر کام کر رہی ہے اور کوئی احتجاج بھی نہیں کرتا۔

دفاعی بجٹ سے متعلق احسن اقبال فکرمند، سوشل میڈیا صارفین کے دلچسپ تبصرے

عامر امین نے کہا کہ افسوسناک بات، یعنی اگر ایسا نہیں ہوا تو اچھا ہوا۔ آپ کس طرف ہیں؟ یہ سمجھنا اب مشکل لگتا ہے۔

دفاعی بجٹ سے متعلق احسن اقبال فکرمند، سوشل میڈیا صارفین کے دلچسپ تبصرے

اسامہ نے کہا کہ وہ پہلے فیصلہ کر لیں کہ مخالفت کرنی ہے یا فوج کی حمایت ہی کرنی ہے۔

دفاعی بجٹ سے متعلق احسن اقبال فکرمند، سوشل میڈیا صارفین کے دلچسپ تبصرے

منیر شریف نے کہا کہ کیا کہنا کیا چاہ رہے ہیں؟ دفاعی اداروں کی شدید ترین خواہش کے باوجود عمران حکومت نے دفاع کا بجٹ نہیں بڑھایا اور پہلے آپ کہتے تھے یہ کٹھ پتلی حکومت ہے ۔ ایسے کیسے بھائی صاحب

دفاعی بجٹ سے متعلق احسن اقبال فکرمند، سوشل میڈیا صارفین کے دلچسپ تبصرے

 

  • جب سے کنپٹی پر پشاوری چپل پڑی ہے یہ ایسی ہی بہکی بہکی باتیں کرتا ہے . ایک چپل دوسری طرف پڑے گا تو خود ٹھیک ہو جائے گا . پریشانی کی کوئی بات نہیں .

  • They think everybody is PATWARI and eat kotha biryani. They show right while turn to left. One day abusing the army worst then the enemies while the other day they are in bed with them in bending position.

  • ضیا کی گشتیوں اور شوریوں کی حرامی ناجائز اولاد ہو ضیا کے پاس ماں امب لینے لیجالیجاکر سیاست میں آیا ہوا بجو نطفہ حرام کتوں کی طرح فوج کے خلاف نہ بھونکے یہ ہو نہیں سکتا فوج کے گٹر میں پلے ہوئے لوگوں کی اکثریت اس بجو کی طرح نطفہ حرام ہے


  • Featured Content⭐


    24 گھنٹوں کے دوران 🔥


    From Our Blogs in last 24 hours 🔥


    >