پنجاب: 7 پرائیویٹ یونیورسٹیز کے ذیلی کیمپسز بند

HEC press release

پنجاب کی سات پرائیویٹ یونیورسٹیز کے ذیلی کیمپس بند کردئیے جائیں گے، ہائیر ایجوکیشن کمیشن نے احکامات جاری کردئیے۔ یونیورسٹیز کو داخلوں سے بھی روک دیا گیا۔

ترجمان ہائیر ایجوکیشن کمیشن کے مطابق صوبے کی سات بڑی پرائیویٹ یونیورسٹیوں کے ذیلی کیمپسز بند کرنے کا حکم دے دیا گیا ہے۔ اس حوالے سے متعلقہ یونیورسٹیز کو نوٹیفیکیشن بھی جاری کردیا گیا ہے۔

صوبے کی سات یونیورسٹیز کے بائیس کیمپسز کو غیر قانونی قرار دیتے ہوئے بند کیا گیا جبکہ تمام یونیورسٹیز کے داخلوں پر بھی پابندی عائد کردی گئی ہے۔

ترجمان کے مطابق یونیورسٹی آف لاہور کے تین کیمپس، یونیورسٹی آف سینٹرل پنجاب کے آٹھ کیمپس، سپیرئیر یونیورسٹی کے چار کیمپس، یونیورسٹی آف بزنس ایڈمنسٹریشن اور اکنامکس کے چار، ہجویری یونیورسٹی کا ایک، یونیورسٹی آف مینجمنٹ اینڈ ٹیکنالوجی کا ایک جبکہ قرشی یونیورسٹی کے دو کیمپس بند کرنے کے ساتھ جامعات کو ان کیمپسز کو رجسٹر کروانے اور مقررہ معیار کے مطابق سہولیات فراہم کرنے کی ہدایات جاری کردی گئی ہیں۔

واضح رہے کہ یونیورسٹیز آف سنٹرل پنجاب کے 8 کیمپسز دنیا نیوز گروپ کے سربراہ میاں عامر محمود اور سپیرئیر یونیورسٹی کے 4 کیمپسز نیوز نیوز اور روزنامہ نئی بات کے مالک کے ہیں۔


Featured Content⭐


24 گھنٹوں کے دوران 🔥


From Our Blogs in last 24 hours 🔥


>