آسٹریلوی ریسرچرز کا دنیا کے تیز ترین انٹرنیٹ کا تجربہ

،ایک سیکنڈ میں ایک ہزار ایچ ڈی فلمیں ڈاؤن لوڈ ہو سکتی ہیں

آسٹریلوی ریسرچرز نے دنیا میں انٹرنیٹ کی تیز ترین رفتار 44.2 ٹیرا بائٹس فی سکینڈ کا کامیاب تجربہ کر لیا۔ اس رفتار کے ساتھ ایک سیکنڈ میں ایک ہزار ایچ فلمیں ڈاؤن لوڈ ہو سکیں گی۔

موناش، سون برن اور آر ایم ائی ٹی یونیورسٹیوں کی مشترکہ ٹیم نے ایک ’مائیکروکومب‘ آپٹیکل چپ میں موجود سینکڑوں انفرا ریڈ لیزرز کے ذریعے رابطہ نیٹ ورک کی مدد سے ڈیٹا ٹرانسفر کیا۔

سنگا پور میں  اس وقت کمرشل انٹرنیٹ کی سب سے زیادہ ڈاؤن لوڈ سپیڈ 197.3 میگا بائٹس فی سیکنڈ ہے۔آسٹریلیا میں اوسط ڈاؤن لوڈ سپیڈ 43.4 ایم بی فی سیکنڈ ہے۔

کرونا وائرس کی وجہ سے لگائے گئے لاک ڈاؤن کی وجہ سے انٹرنیٹ سسٹم بہت دباؤ میں ہے۔دنیا بھر میں سٹریمنگ فراہم کرنے والی کمپنیز کو اپنی کوالٹی کے معیار میں کمی  کا بھی کہا گیا تھا تاکہ انٹر نیٹ ٹریفک کو کم کیا جا سکے ان میں یوٹیوب اور نیٹ فلیکس بھی شامل تھیں اور ان کمنییز نے اپنے معیار کو کم کرنے کی حامی بھی بھری تھی۔

نئی ٹیکنالوجی سے لیس انگلیوں کے سائز جتنی نئی ڈیوائس با آسانی ڈیٹا کی صلاحیت کو بڑھائے گی اور اس کے لیے کم جگہ اور کم توانائی درکار ہو گی اور اس کی قیمت بھی کم رکھی جائے گی۔

OR comment as anonymous below

آپ کا ای میل ایڈریس شائع نہیں کیا جائے گا۔ ضروری خانوں کو * سے نشان زد کیا گیا ہے


24 گھنٹوں کے دوران 🔥

View More

From Our Blogs in last 24 hours 🔥

View More