پی ٹی اے نا کام، نوجوانوں نے وی پی این کے ذریعے پب جی گیم ان لاک کر لی

پی ٹی اے نا کام، نوجوانوں نے وی پی این کے ذریعے پب جی گیم ان لاک کر لی۔

کستان ٹیلی کمیونیکیشن اتھارٹی (پی ٹی اے) مقبول ترین آن لائن گیم (PUBG) پر پابندی لاگو کرنے میں نا کام ہوچکی ہے، نوجوانوں نے بغیر کسی مشکل کے اس مقبول ترین آن لائن گیم کو کھیلنے کے لئے مختلف راستے تلاش کر لیے ہیں، جن میں سے ایک راستہ پلے سٹور سے وی پی این ڈاؤن لوڈ کر کے، اس کے ذریعے گیم کھیلنے کا ہے۔

اس گیم کو کھیلنے والے ایک نوجوان سے جب سوال کیا گیا کہ پی ٹی اے کے اس سے گیم پر پابندی لگانے کے باوجود آپ یہ گیم کیسے کر رہے ہیں تو اس نوجوان نے بتایا کہ ہم پلے سٹور سے وی پی این ڈاؤن لوڈ کرکے آسانی سے (PUBG) گیم کھیل رہے ہیں، پلے سٹور میں کئی طرح کے بیانات موجود ہیں، جنہیں ڈاؤن لوڈ کرکے پراکسی کے ذریعے اس گیم کو کھیل سکتے ہیں۔

ایک دوسرے نوجوان نے اس خیال کہ اس گیم نے اب تک کئی نوجوانوں کی جان لی ہیں، کو مسترد کرتے ہوئے کہا کہ ایسا کچھ نہیں ہے کہ اس گیم کی وجہ سے کسی نے اپنی جان لی ہو، میں اس دعوے کو مسترد کرتا ہوں، اس نے کہا کہ اگر اس دن پر پابندی لگا دی جائے گی تو کرونا وائرس کی وجہ سے لاک ڈاون کے دوران ہم اپنا فارغ وقت کیسے گزاریں گے؟

یہاں یہ امر قابل ذکر ہے کہ 01 جولائی کو ملک میں PUBG پر پابندی عائد کردی گئی تھی، لیکن پابندی کے باوجود اس آن لائن گیم کو کھیلنے والوں کی تعداد میں کمی بالکل بھی دیکھنے میں نہ آئی بلکہ انہوں نے اس گیم کو کھیلنے کے متعدد راستے تلاش کر لئے۔

دوسری جانب پی ٹی اے کے ترجمان کا کہنا تھا کہ PUBG پر مستقل طور پر پابندی عائد کرنے کا فیصلہ مشاورت کے بعد کیا جائے گا، اس نے کہا کہ ہمیں اس گیم سے متعلق بہت سی شکایات موصول ہوئی ہیں، موصولہ شکایات میں یہ دعوی کیا گیا ہے کہ ایک تو یہ گیم وقت کا ضیاع ہے تو دوسرا اس گیم کا بچوں پر منفی اثر پڑ رہا ہے۔

اس آن لائن گیم کو پھیلنے سے منع کرنے پر لاہور میں اب تک تین بچے خود کشی کر چکے ہیں، خودکشی کرنے والے دو بچوں کے والدین کی جانب سے لاہور ہائی کورٹ میں شکایت درج کروائی گئی تھی کہ ہم نے اپنے بچوں کو یہ گیم کھیلنے سے منع کیا جس پر انہوں نے خودکشی کرکے اپنی جان لے لی، لہذا ہماری استدعا ہے کہ اس گیم میں پر پابندی عائد کی جائے۔


  • Featured Content⭐


    24 گھنٹوں کے دوران 🔥


    From Our Blogs in last 24 hours 🔥


    >