کے الیکٹرک کا آئی ٹی سسٹم ہیک، ہیکر نے 38 ملین ڈالرز کا مطالبہ کر دیا

کے الیکٹرک کا آئی ٹی سسٹم ہیک، ہیکر نے 38 ملین ڈالرز کا مطالبہ کر دیا

کے الیکٹرک کو رواں ہفتے کے آغاز میں سائبر حملے کا سامنا کرنا پڑا تھا۔ جس کے بعد کے الیکٹرک نے سائبر حملے کے توڑ کیلئے بین الاقوامی آئی ٹی سیکیورٹی ماہرین سے رابطہ کرلیا ہے۔

کے الیکٹرک کا آئی ٹی سسٹم ہیک کرنے والے ہیکر نے کے الیکٹرک سے 38 ملین ڈالرز طلب کرلئے ہیں جبکہ ہیکرز کی جانب سے کے الیکٹرک کو 15ستمبر کی ڈیڈلائن بھی دے دی گئی ہے۔ جس میں ہیکر نے کہا ہے کہ رقم ادا نہ کی تو مطالبے کی رقم دگنی ہو جائے گی۔

ہیکرز نے 15ستمبر تک کے الیکٹرک کا ڈیٹا واپس کرنے کیلئے38ملین ڈالرزکی رقم کا مطالبہ کیا ہے جسے مقررہ وقت تک نہ ملنے کی صورت میں دگنا کر دیا جائے گا۔

گذشتہ روز کے الیکٹرک نے سائبر حملے کی تصدیق کے بعد صارفین کے لیے اہم ہدایات جاری کی تھیں۔ کے الیکٹرک کے ترجمان کی جانب سے جاری ہونے والے بیان میں بتایا گیا تھا کہ کے الیکٹرک کے سسٹم پر سائبر حملہ کیا گیا ہے جس کی وجہ سے ادارے کو مشکلات کا سامنا کرنا پڑا۔

یاد رہے کہ ہیکرز نے دعویٰ کیا ہے کہ کے الیکٹرک کے صارفین سمیت بہت اہم دستاویزات بھی ہمارے پاس ہیں۔

ترجمان کے مطابق سائبر حملے کے بعد احتیاطی تدابیر اختیار کرتے ہوئے سسٹم کی حفاظت کو یقینی بنایا گیا، بل کی ادائیگی کے حل، کال سینٹر سمیت تمام کسٹمر سروسز آپریشنل کو بحال کردیا گیا جبکہ غیر متعلقہ سروسز کو سسٹم سے ختم کردیا گیا ہے۔


  • Featured Content⭐


    24 گھنٹوں کے دوران 🔥


    From Our Blogs in last 24 hours 🔥


    >