قابل اعتراض مواد: وقار ذکاء کے شو پر پابندی برقرار

پیمرا نے نجی ٹی وی چینل بول انٹرٹینمٹ کے پروگرام ‘چیمپیئنز’ پر قابل اعتراض مواد نشر کرنے کے باعث عائد پابندی برقرار رکھنے کا فیصلہ کرلیا۔

پیمرا نے اپنے اعلامیے میں کہا کہ بول کے پروگرام چیمپیئنز پر قابل اعتراض اور نامناسب مواد نشر کرنے پر 20 جنوری 2020 کو پابندی اور 10 لاکھ روپے جرمانہ عائد کیا گیا تھا۔

بیان میں مزید کہا گیا کہ مذکورہ پابندی کو چینل نے اسلام آباد ہائیکورٹ میں چیلنج کیا تھا جس پر متعدد سماعتوں کے بعد اسلام آباد ہائیکورٹ نے پیمرا کا مؤقف تسلیم کیا اور چیمپیئنز پروگرام میں نشر کیے جانے والے مواد کو نازیبا، قابل اعتراض اور ملکی اقدار کے منافی قرار دیا اور پروگرام کی نشریات پر پابندی عائد کردی۔

پیمرا نے اعلامیے میں مزید کہا کہ عدالت نے چینل کو یہ بھی ہدایت کی ہے کہ وہ 10 لاکھ روپے کا جرمانہ پیمرا کو ادا کرے۔

واضح رہے کہ نجی ٹی وی چینل بول پر معروف اداکار وقار ذکا کی میزبانی میں چمنینز کے نام سے ایک پروگرام نشر کیا جارہا تھا جس میں قابل اعتراض مواد نشر کیا جاتا تھا اور ذومعنی گفتگو کی جاتی تھی۔ وقار ذکاء اس سے قبل ایسے ہی شوز اے آروائی ڈیجیٹل پر بھی کرچکے ہیں جس میں ذومعنی اور قابل اعتراض گفتگو خاصہ ہوتی تھی۔

اگرچہ اس پروگرام کے نشر ہونے پر سوشل میڈیا پر کافی تنقید ہوئی تھی لیکن اس کے باوجود حیران کن طور پر ان پروگرام چیمپیئنز کی ویڈیوز یوٹیوب پر ٹرینڈنگ میں موجود رہی تھی۔

  • جرمانے کی رقم اتنی ہونی چاہیے کہ کسی دوسرے کو کبھی سوچنے کی بھی ہمت نا ہو.
    یہ لوگ اتنے جرمانے کو خرچے میں ڈال لیتے ہیں اور کام جاری رکھتے ہیں.

    اس کو کم از کم بیس کروڑ جرمانہ ہونا چاہیے تھا.

    .

  • ہمارے معاشرے میں بہت سی برائیاں ہیں، ہمیں خود کو سدھارنا ہوگا، خواتین کا احترام لازم ہے لیکن بعض خواتین کو اپنے طور طریقوں، اپنی گفتگو اور لباس پر خود ہی غور کرنا چاہیئے ، ان چیزوں (مندرجہ بالا ) کے اپنانے کو ترقی یا ترقی پسند نہیں کہا جاسکتا،علم و ادب سے ہی ترقی حاصل ہوگی .
    اسطرح کے پروگرام کی معاشرے میں کوئی گنجائش نہ تھی اور آئندہ بھی قطعاً نہیں ہونی چاہیئے، میری درخواست ہیکہ ہر شخص اپنی اہم ترین ذمے داری سمجھتے ہوئے اپنے اردگرد کو سنوارنے کی بھرپور کوشش کرے


  • Featured Content⭐


    24 گھنٹوں کے دوران 🔥


    From Our Blogs in last 24 hours 🔥


    >