عثمان،ملک ، عظمی خان اور ہما خان کے خلاف زنا اور منشیات کے مرتکب ہونے پر مقدمہ درج

عثمان،ملک ، عظمی خان اور ہما خان کے خلاف زنا اور منشیات کے مرتکب ہونے پر مقدمہ درج

تفصیلات کے مطابق عثمان ملک، عظمی خاں اور ہما خاں کے خلاف زنا اور منشیات جیسے سنگین جرائم کا مرتکب ہونے کی درخواست دائر کر دی گئی ہے اور مقدمہ کے اندراج کے لیے ایڈووکیٹ جناب وقاراحمد چیمہ اور جناب اظہر محمود کھوکھر ایڈووکیٹ نے جناب ایڈیشنل سیشن جج عمران جاوید گل کی عدالت میں 22 A,B کی پٹشن دائر کر دی ہے اور مخالف پارٹیز کو نوٹسز جاری کر دئیے گئے ہیں، مقدمہ کی آئندہ سماعت کے لیے 10-06-20 کی تاریخ مقرر کر دی گئی ہے۔

ایڈووکیٹ اظہر محمود کھوکھر کا عثمان ملک ، عظمی خان اور ہما خان کے خلاف دائر کی گئی پٹیشن میں کہنا تھا کہ ” گزارش ہے کہ سائل اظہر محمود کھوکھر ولد یسین کھوکھر وکالت کے عظیم پیشے سے منسلک ہے، یہ کہ مورخہ 2جون 2020 شام پانچ بجے اپنے موبائل پر سوشل میڈیا کا استعمال کررہا تھا کہ اچانک آمنہ عثمان زوجہ عثمان ملک دختر ملک ریاض اپنے ایک ویڈیو کلپ تین منٹ اور بارہ سیکنڈ کا سنا، جس میں آمنہ عثمان اپنے خاوند عثمان ملک اور اداکارہ عظمی خان کے درمیان فیزیکل ریلیشن اور زنا کے مرتکب ہونے کی گواہی دے رہی ہیں۔ جس کے سچ ہونے میں کوئی شک نہیں ہے۔

وکیل کی جانب سے دائر کی گئی پٹیشن میں مزید یہ کہا گیا ہے کہ ” آمنہ عثمان اپنے ویڈیو بیان میں زنا کے علاوہ شراب اور کوکین سمیت دیگر جرائم میں ملوث ہونے کا اعتراف کر رہی ہے، جو کہ وسیع ترمفادات عامہ کے خلاف جو کہ معاشرے میں زہر اور بے راہروی پھیلانے کا باعث بن رہی ہے”

ایڈووکیٹ اظہر محمود کھوکر کا دائر کی گئی اپنی پٹیشن میں مزید یہ کہنا تھا کہ ” لہذا ایک قانون دان کی حیثیت سے اپنا اخلاقی فرض سمجھتے ہوئے اس بے حیائی کو روکنے کے لیے فرسٹ انفارمر کے طور پر درج ذیل ملزمان کے خلاف زنا ، حدود آرڈینینس اور انسداد منشیات کے تحت مقدمہ درج کر کے ملزمان کو گرفتار کیا جائے اور قانون کے مطابق سخت کارروائی کرتے ہوئے ملزمان کو سزا دی جائے”

ایڈیشنل سیشن جج عمران جاوید گل کی عدالت نے ایڈووکیٹ اظہر محمود کھوکھر کی درخواست منظور کرتے ہوئے مقدمہ کو سماعت کے لیے مقرر کرتے ہوئے 20 جون 2016 کی تاریخ مقرر کی ہے، جب کہ مقدمے کی سماعت کے نوٹسز بھی فریقین کو بھجوا دیئے گئے ہیں۔

خیال رہے کہ چیئرمین بحریہ ٹاؤن ملک ریاض کی بیٹیوں کی جانب سے بری طرح سے تشدد کا نشانہ بنائے جانے پر اداکارہ عظمی خان اور انکی بہن ہما خان نے اپنے ساتھ ہوئی زیادتی پر انصاف حاصل کرنے کے لیے اپنے وکیل بیرسٹر حسان نیازی کی وساطت سے مقدمہ درج کروایا تھا، لیکن شدید دباؤ کے باعث انہوں نے اپنا مقدمہ یہ کہہ کر واپس لے لیا کہ وہ ان کے خلاف کسی قسم کی کوئی کارروائی نہیں کروانا چاہتی ہے، جبکہ ہم لوگوں میں جو کچھ بھی ہوا وہ صرف ایک غلط فہمی تھی۔

    Did three ‘aaqil and balig’ MEN saw the act of penetration ? If NO there is no case.
    If women are being used as witnesses then 1 MEN=2 WOMEN formula apply.
    Alternatively the accused willfully accept in front of a judge that they actually did the deed. If this can’t be done then there is no case. In Islamic law proving Zina is next to impossible . Only porn stars would be culpable according to rules.

    Minister (4k + posts)

    Now we can understand our justice and police system better…. This was predicted exactly that Malik Riaz will not be even questioned and these poor ladies will be convicted instead of getting justice….

    Minister (3k + posts)

    Ess kay pechay Malik Riaz ha phalay Uzma khan sey case withdraw kerwaya pher Uzma ko maqadmay main phasa deya ha. Yeah wakeel sahab nay Uzma kay withdraw hunay sey phalay keyoon Ne muqadma court main keya? Zara socheay Pakistan main mafia kessay kam kerta ha.

    (65 posts)

    Haassaan Niazi dalaal per bhi Muqadma hoba chiyee. SAHOOLATKAAR AUR FAROOGH DAY RAHA HAY YEH ZANA KO.   Byaghaanee Shaadi mein Abdullah deewana.

    Citizen (59 posts)

    Let’s get there medical check up including Malik Riaz daughter to check the veracity .
    Why did this stupid lawyer go after Zardari , Bilawal when Cynthia already made the allegations .
    these fucking lawyers only want to get a piece of these trapped women .

OR comment as anonymous below

آپ کا ای میل ایڈریس شائع نہیں کیا جائے گا۔ ضروری خانوں کو * سے نشان زد کیا گیا ہے


24 گھنٹوں کے دوران 🔥

View More

From Our Blogs in last 24 hours 🔥

View More