برانڈ ایمبسیڈر سے متعلق بیان پر آغاعلی نے یاسر حسین کو آڑے ہاتھوں لے لیا

ترک اداکارہ کے معروف پاکستانی موبائل کمپنی کے برانڈ ایمبسیڈر بننے پر تنقید کرنے پر پر اداکار آغا علی نے اداکار یاسر حسین کو آڑے ہاتھوں لے لیا۔

اپنے انسٹاگرام اکاؤنٹ پر ایک سٹوری کے ذریعے اداکار آغا علی نے کہا کہ اداکار ہمیشہ بیرون ملک میں کام کرنے کو ترجیح دیتے ہیں اور دوسرے ممالک کے ساتھ کام کرنے کو پسند کرتے ہیں اور جب ہمیں دوسرے ممالک سے کام کی آفر ہوتی ہے تو ہمیں خوشی ہوتی ہے۔

آغا علی نے یاسر حسین پر تنقید کا نشانہ بناتے ہوئے مزید کہا کہ جب کسی دوسرے ملک کے اداکار پاکستانی برانڈ کے ساتھ معاہدہ طے کرتے ہیں تو یہاں کچھ لوگ اس پر اعتراض کرنا شروع ہو جاتے ہیں اور کہتے ہیں کہ اگر باہر کے لوگ یہاں آئیں گے تو یہ ہمارے پروجیکٹ چھین لیں گے۔بین الاقوامی اداکاروں کو معاہدے ملنے کے بعد لوگوں کو پریشان نہیں ہونا چاہیے بلکہ ہمیں بین الاقوامی ٹیلنٹ کا خوش آمدید کہنا چاہیے۔

انہوں نے مزید کہا کہ اللہ نے ہمارے نصیب میں جو لکھا ہے ہمیں اُس سے نہ زیادہ ملے گا نہ کم، برائے مہربانی ایسے بیانات دیکر یہاں کے اداکاروں میں غیر محفوظ ہونے کی فضا قائم نہ کریں بلکہ خوش دلی سے دوسرے ممالک کے اداکاروں کو خوش آمدید کہیں کیوں کہ جو آرہا ہے اسے آنے دو، خوش رہیں اور محنت کریں۔

واضح رہے کہ معروف موبائل کمپنی کیو موبائل نے ’’ارطغرل غازی‘‘ میں حلیمہ سلطان کا کردار کرنیوالی اداکارہ اسریٰ بلجیک کو اپنے موبائل فون کا برانڈ ایمبسیڈر مقرر کیا ہے۔ اداکار یاسر حسین نے موبائل کمپنی کے اس اقدام کو تنقید کا نشانہ بنایا اور کہا آپ کو نہیں لگتا کہ پاکستانی برانڈ کی برانڈ ایمبسیڈر پاکستانی ہونی چاہیے؟ نہ بھارتی اور نہ ترک اداکارہ۔

بعد ازاں انہوں نے ایک اور سٹوری میں پاکستان کی تقریباً تمام بڑی اداکاراؤں اور ماڈلز کے نام لکھ کر کہا کہ کیا ماہرہ خان، صباقمر، سونیاحسین، منال خان، ایمن خان، امر خان، زارا نور عباس، ہانیہ عامر، ثنا جاوید، یمنیٰ زیدی، ارمینا خان، سارہ اور حرامانی کوئی اس قابل نہیں کہ پاکستانی برانڈ کی برانڈ ایمبسیڈر بن سکے؟

  • جب گدھے اپنے آپ کو زیبرا سمجھیں تو اصلی زیبرا کی آمد پر گدھے ڈر جاتے ہیں اور اپنا فیو چر خطرے میں محسوس کرتے ہیں حالانکہ ٹیلنٹ اور موقع دونوں  قدرت عطا کرتی ہے اور اگر ہما رے حا سد اور احساس کمتری کے مارے ہوۓ گدھے بھی چاہیں تو محنت کر کے زیبرا بن سکتے ہیں حسد نا کر و محنت کرو 

  • Mekhnat ker hasad na kar, Yasir Hussain duaein de usse k jis ne tujhey pakistan ke show biz industry mein introduce kerwaya, warna tere jese karachi k her bridge, kachra kundi, naddi, ya play grounds mein bhaith ker charas pee rahe hote hein,,


  • Featured Content⭐


    24 گھنٹوں کے دوران 🔥


    From Our Blogs in last 24 hours 🔥


    >