فلم ”پرتھوی راج“کے ریلیز سے قبل ہی بھارت میں انتہا پسند جماعت کا احتجاج اور ہنگامے

اداکار اکشے کمار کی فلم ’پرتھوی راج‘ کے ریلیز ہونے سے قبل ہی بھارت میں ہندو انتہا پسند جماعت اکھیل بھارتیہ ہندو مہاسبہا کی جانب سے ہنگامے شروع ہوگئے۔

تفصیلات کے مطابق اکشے کمار کی فلم ’پرتھوی راج‘ کے خلاف بھارت کی ہندو انتہا پسند جماعت اکھیل بھارتیہ ہندو مہاسبہا نےچندی گڑھ شہر میں احتجاجی مظاہرے شروع کردئیے۔

احتجاجی ممظاہروں میں مظاہرین نے اداکار اکشے کمار اور فلم ہدایت کار کے خلاف شدید نعرے بازی کی اور ان کے پتلے جلائے۔

ہندو انتہا پسند جماعت نے فلم کے نام کے حوالے سے اپنے تحفظات کا اظہار کرتے ہوئے ریلیز سے قبل فلم کا نام تبدیل کرنے کا مطالبہ کیا ہے۔

جماعت کے مرکزی رہنماؤں نے مؤقف اختیار کیا کہ تاریخ پر مبنی فلم کا نام ’پرتھوی راج‘ کے بجائے ’ہندوسمرات پرتھوی راج چوہان‘ رکھا جائے۔

ہندو جماعت کے رہنماؤں نے مزید کہا صرف ’پرتھوی راج‘ نام رکھنا ہندوؤں کے بہادر حکمراں کی توہین کے مترادف ہے۔

رہنماؤں نے فلم کو ریلیز کرنے سے قبل دکھائے جانے کا بھی مطالبہ کیا ہے تاکہ فلم میں بتائی گئی تاریخ کا جائزہ لیا جاسکے۔

واضح رہے کہ پرتھوی راج چوہان سے ہندو خاص لگاؤ رکھتے اور عزت واحترام سے انکا نام لیتے ہیں اور انہیں ایک بہادر حکمران کے طور پر پیش کرتے ہیں جبکہ پرتھوی راج چوہان کو سلطان شہاب الدین غوری کے ہاتھوں شکست ہوئی تھی اور پرتھوی راج چوہان کو سلطان غوری نے گرفتار کرکے مروادیا تھا۔


  • Featured Content⭐


    24 گھنٹوں کے دوران 🔥


    From Our Blogs in last 24 hours 🔥


    >