نوجوان کی سڑک کے عین درمیان طالبات کے سامنے انتہائی فحش حرکت

اتنہائی گھٹیا حرکت۔۔ ایک شخص نے یونیورسٹی کے قریب موٹر سائیکل روک کر سڑک کے بیچوں بیچ طالبات کے سامنے مشت زنی شروع کردی۔۔

یہ ویڈیو ایک نوجوان نے شئیر کی جس کی دوست کے ساتھ یہ واقعہ پیش آیا جب وہ یونیورسٹی کلاس لینے جارہی تھیں اور ساتھ باقی اسکی ساتھی سٹوڈنٹس بھی تھیں۔

ویڈیو شئیر کرنیوالے شخص کا کہنا ہے کہ یہ قابل مذمت واقعہ اسکی ایک دوست کے ساتھ پیش آیا۔ جوہرٹاؤن لاہور میں واقع یونیورسٹی آف منیجمنٹ اینڈ ٹیکنالوجی کے قریب دوپہر 3 بجے ایک نوجوان نے طالبات کے سامنے مشت زنی شروع کردیا اور وہ بھی سڑک کے عین درمیان میں موٹر سائیکل روک کر ۔۔۔ حالانکہ یونیورسٹی جانیوالی طالبات ایک معقول لباس میں تھیں۔

ویڈیو میں ایک شخص مشت زنی کررہا ہے اور اسے ایک خاتون روک رہی ہے اور کہہ رہی ہے کہ لعنتی شرم نہیں آرہی تجھے

اس نے بتایا کہ آج میں اپنی دوستوں کے ساتھ ہوسٹل سے کلاس لینے کیلئے جارہی تھی کہ ایک شکص بائیک پر سامنے کھڑا تھا اور یہ سب کرنے لگ گیا اور جب ہم نے شور مچایا تو تب بھی اسے فرق نہیں پڑرہا تھا اور جب ہم نے فون نکال کر بولا کہ ہم ویڈیو بنائیں گے تو کہنے لگا کہ بنالو میں بعد میں تمہیں دیکھ لوں گا

اور وہ اپنے کام میں لگا رہا اور جب ہم بھاگے اور سوسائٹی کے سیکیورٹی گارڈ کو بتانے کیلئے گئے تو وہ شخص بھاگ گیا

خاتون نے اس شخص کا بائیک نمبر بھی بتایا۔ خاتون کے مطابق اسکا موٹرسائیکل نمبر RNJ 3173 ہے۔

ویڈیو بنانیوالی خاتون کا کہنا ہے کہ حقوق نہیں دے سکتے تو کم از کم عزت تو دیدو۔ کوئی بھی عورت محفوظ نہیں ہے۔ نہ گھر میں نہ گھر سے باہر

خاتون نے مزید کہا کہ اگر آج یہ ہمارے ساتھ ہوا ہے تو کل آپکے ساتھ بھی ہوسکتا ہے۔ براہ کرام اس پر آواز اٹھائیے تاکہ دوبارہ کبھی کسی کے ساتھ ایسا نہ ہو

    • He is doing absolutely what Mera jism meri marzee want. Dont discriminate men. You dont have a right over a Man’s body he can do whatecver he likes. If woman can come out in revealing clothes then so can men and touch their body the way they like, none of woman’s business.

  • That guy should be arrested, put him in jail & every morning without giving him any food or water force him to masturbate 5 times, repeat this practice before giving him any thing to eat and drink for 10 days.

    • mard ka jism mard kee marzee. yeh aurat kyoon uss ko harass ker rahee hay. agar aurat revealing clothes pehan ker apni hips per haath mal saktee hay tu iss ka jim iss ki marzee. plzzzz!!!!!!!!!

      • Please this is an Islamic country and both men and women. Is distroying it with this foreign imported slogan…. We are not allowed to wear revealing clothes.. Nor men allowed to do this… There is no justification of this act…. Kal ko app log kahyeen gaye sarak per kharey ho kar kiss kar lo…. Humara jism humari marzi… Tu it’s not allowed… Please let’s make this country a peaceful Islamic country…. Jis wajah sey Bana tha… App logoon ko Mera jism karna hi hai tu just go out of Pakistan…. Or jo country is ki ijazat dey wahan ja kar kar lo

  • اس کو ان دیکھا کر کے نکل جانا چاہیے تھا جیسا وہ گھٹیا انسان کر رہا ہے کوئی دماغی مریض ہی ایسا کر سکتا ہے۔ کون عزت نہیں دیتا عورتوں کو پیدا ہونے سے لیکر وبر تک کبھی بیٹی کبھی بہن کبھی بیوی اور کبھی ماں کے عوپ میں عزت دی جاتی ہے 22 کروڑ کی آبادی میں اگر چند سو لوگ گھٹیا حرکت کریں اور اس کو باقی سارے مرودوں سے جوڑنا کہاں کی حقیقت ہے۔ مغرب کی عورت کی طرح چاہتی ہے گھر کا کام بھی کرو فیکٹریاں میں بھی کام کرو پھر ٹھیک رہیں گے حقوق؟ عورت اپنا مقام پہچان جو رتبہ ملا ہے اسلام میں یا ہمارے معاشرے میں اس کی ودر کر نہیں تو مغرب کی عورت کی طرح پچھتاۓ گی۔ تمہاری آزادی مرد کا تمہارے تک پینچنا آسان بنا دے گی اور یہ مرد چاہتا ہے لہیکن ہم پھر بھی عورت کو اسلام کے مطابو عزت دینا چاہتے ہیں۔ عورت کا معنی پردہ ہے ذرا سوچm

  • Mard Ka Jism Mard ki Marzee. #StopDIScriminationAgainstMen Mard bhi open mein apnay organs kay saath jo chayee ker sakta hay. "Mard kay kapray yeh jism nanga nahee , Aurat kee nazar ghtiya hay.” #AllowFreeMastba++nForMen #MardKeeMasterba+++nUssKiMarzee #MardMasterbat+++nRightsTeriSochGhatiya

  • Govt. should catch him and throw behind the bars, give him punish in crowd because he do worth shame act in openly also his family and friends should there available, also make video while punished and upload on social media ,

  • I am really disappointed at the level of stories being shared at this blog. Really this video did not deserve to be shared as a news article on this site or it should have been censored or just the picture of that person should have been shown and the wording of the article could have avoided obscene words.

  • میرا جسم میری مرضی کا پہلا نتیجہ جب عورتیں خود یہی کچھ چاھتی ھیں تو ایسا تو ھوگا معاشرہ کس طرف جا رھا ھے پہل لڑکیوں نے کی ھے 8 مارچ کو میرا جسم میری مرضی اب کیا کہا جا سکتا ھے شرم تو تب أۓ گی جب لڑکیاں اپنے ڈرامے بند کریں گی بحرحال جو کچھ بھی ھو رھا ھے بہت غلط ھو رھا ھے ایسا تو یورپ میں بھی نہی ھوتا اللہ خیر کرے ھمارا پاکستان ایک اسلامی ملک ھے نام ریاست مدینہ کا لیا جاتا ھے لیکن یہودیت سے بڑھ کر کام ھونے جا رھے ھیں

  • ye video lagane wale bhi intahahi begherat aur besharm hai..sirf munsaib alfaz men khabar lagai ja sakti thi…maloom hota hai iss khabees ne ye video sirf viral karne ke liye khud banwai hai

  • لعنت ہے ایسے بے غیرت پر بے شرم جانور صفت کو ذرا بھی حیا نہیں ڈوب مرنے کا مقام ہے
    بے غیرت کی وجہ سے باقی مردوں کو بھی باتیں سننی پڑ رہی ہیں
    اللہ پاک ہمیں عقل و شعور عطا فرمائے
    آمین ثم آمین

  • Men like him should be punished in the middle of the street as well. Because this act is indecent and completely against our religion Islam. Not a supporter of aurat March at all but just differentiate things as right or wrong according to the teachings of Islam which is the best in the whole universe and can never be replaced with any liberal view or modern era’s teachings. People look only at the slogans of aurat March, the whole point of aurat March or even women’s or fathers or mothers day is pointless because it only gives us excuse to celebrate 1 relation or 1 gender on 1 day out of 365 days and rest of 364 days we don’t appreciate the efforts or love our parents, or our wives, or daughters, sons, sisters. This is not what our religion or even ethics teaches us. We should give love and respect to our parents and all the women specially throughout our lives not just 1 day. Finally 1 woman or 1 man with indecent act doesn’t represent all the women or all the men of pakistan or the world. So we shouldn’t be giving so much importance to people like this man or women like marwi sarmad who are trying to destroy our Islamic society.


  • Featured Content⭐


    24 گھنٹوں کے دوران 🔥


    From Our Blogs in last 24 hours 🔥


    >